پولیس کی کوتاہیاں تو معاف کی جا سکتی ہیں، رشوت نہیں: حبیب الرحمن

21 اکتوبر 2012

لاہور (این این آئی) انسپکٹر جنرل پولیس محمد حبیب الرحمن نے کہا ہے کہ پولےس افسران حاکم نہےںعوام کی جان و مال کے محافظ ہےںاور ےہ وردی ہمارے پاس عوام کی امانت ہے اور اس امانت کی حفاظت صرف اور صرف عوام کو انصاف کی فراہمی سے ےقےنی بنائی جا سکتی ہے۔ کھلی کچہری مےں آر پی او ملتان، عامر ذوالفقار، ڈی پی او خانےوال، رائے اعجاز احمد، ڈی پی او، لودھراں ، آغا محمد ےوسف اور ڈی پی او وہاڑی، علی ناصر رضوی کے علاوہ تمام ڈوےژنل افسران نے شرکت کی ۔آئی جی نے کہا پولےس کی چھوٹی موٹی کوتاہےاں تو معاف کی جاسکتی ہےں مگر رشوت اور بد عنوانی پر سمجھوتہ نہےں کےا جائے گا۔ پنجاب سے جرائم کے خاتمہ کے لئے صوبہ بھر مےں اچھی شہرت کے حامل اےماندار پولےس افسران تعےنات کےے گئے ہےں۔ پنجاب کے تمام اضلاع مےں دہشت گردی، ڈکےتی، قتل اور اغواءبرائے تاوان جےسے سنگےن جرائم مےں ملوث ٹاپ ٹےن اشتہارےوں کی فہرستےں تےار کر لی گئی۔ پنجاب مےں جرائم کی شرح مےں 25فےصد تک کمی واقع ہوئی ہے۔ شکاےات کے ازالے کے لئے موقع پر احکامات جاری کےے۔ خواتےن کی شکاےات پر اےس اےچ او تھانہ سٹی خانےوال، ذوالفقار اور اےس اےچ او تھانہ مخدوم پور، زاہد گجر کو فوری معطل کرنے کے احکامات بھی جاری کےے۔