حافظ آباد کچہری میں پولیس اور وکلاءمیں ہاتھا پائی

21 اکتوبر 2012


حافظ آباد (نمائندہ نوائے وقت) حافظ آباد ضلع کچہری میں پولیس اور وکلاءمیں ہاتھا پائی ہوگئی۔ ذرائع کے مطابق پولیس نے ملزم کی ضمانت منسوخ ہونے پر اسے گرفتار کیا تو وکلاءالجھ پڑے۔ پولیس اہلکار نے وکیل کو تھپڑ مار دیا جس کے باعث ہاتھاپائی شروع ہوگئی۔ ایک وکیل کی قمیض پھٹ گئی۔ ڈسٹرکٹ بار نے پولیس گردی کے خلاف 22اکتوبر بروز سوموار کو مکمل ہڑتال کا اعلان کر دیا۔ گزشتہ روز ایڈیشنل سیشن جج اشتر عباس کی عدالت سے ملزم محمد اسلم کی عبوری ضمانت عدم پیروی پر خارج ہوئی تو اس کے وکیل نے عدالت میں پیش ہو کر دوبارہ ضمانت کیلئے درخواست دائر کر دی لیکن پولیس تھانہ ونیکے تارڑ کے اے ایس آئی رانا مبشر اور اے ایس آئی محمد اصغر نے ملزم محمد اسلم کو گرفتار کر لیا۔ جس پرملزم کے وکیل آصف چٹھہ سے تکرار بڑھی تو پولیس ملازمین نے وکیل پر دھاوابول دیا۔ وکلاءنے ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج کی عدالت میں ایس ایچ او تھانہ ونیکے تارڑ رانا قیصر جمیل، سب انسپکٹر عمردراز گوندل، اے ایس آئی رانا مبشر اور اے ایس آئی محمد اصغر کے خلاف مقدمہ کے اندراج کےلئے درخواست دائر کر دی جس پر سیشن جج نے ڈی پی او سے جواب طلب کر لیا۔

آئین سے زیادتی

چلو ایک دن آئین سے سنگین زیادتی کے ملزم کو بھی چار بار نہیں تو ایک بار سزائے ...