باجوڑ ایجنسی سے شدت پسندوں کو نکال دیا، حکومتی عملداری قائم کر دی: سیکٹر کمانڈر

21 اکتوبر 2012


باجوڑ (این این آئی) سیکٹر کمانڈر شمالی بریگیڈیئر حیدر علی نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا باجوڑ ایجنسی میں حکومتی عملداری قائم کر دی گئی ہے اور شدت پسندوں کو ایجنسی کے ان علاقوں سے بھی نکال دیا گیا ہے جو ان کے گڑھ تصور کئے جاتے تھے۔ انہوں نے کہا فوج کے خیال میں شدت پسندوں کے خاتمے کے بعد کرفیو کی ضرورت نہیں۔ فوج نے یہ فیصلہ ایجنسی کے لوگوں کی بہتری کے مدِنظر لیا ہے اور اب لوگ آزادانہ طور پر گھوم پھر سکتے ہیں تاہم ان کا کہنا تھا سکیورٹی چیک پوسٹس قائم رہیں گی لیکن ان پر چیکنگ کو نرم کیا جائے گا۔ ان کا کہنا تھا مقامی افراد اب محفوظ ہیں اور ان کو ایجنسی کے اندر سے کوئی خطرہ نہیں۔ سرحد پار حملوں کے بارے میں سوال پر انہوں نے کہا پاکستانی فوج نے ایجنسی کی افغانستان سرحد کے ساتھ علاقوں میں نئی چیک پوسٹیں قائم کی ہیں اور اس کے علاوہ امن لشکر بھی قائم کئے ہیں۔ انہوں نے کہا مقامی رضا کار سرحد کے قریب شدت پسندوں کی نقل و حرکت پر نظر رکھیں گے۔ مقامی افراد کو ایسے عناصر کی نشاندہی کرنی ہو گی جو شدت پسندوں کو پناہ دیتے ہیں۔