شمالی وزیرستان میں فوری آپریشن چاہتے ہیں : امریکی پیغام

21 اکتوبر 2012

اسلام آباد (سکندر شاہین/ نیشن رپورٹ) بعض ذرائع کے مطابق جنرل اشفاق پرویز کیانی اور امریکی نمائندہ خصوصی مارک گراسمین کی ملاقات کے دوران شمالی وزیرستان میں مکمل فوجی آپریشن کے حوالے سے بھی معاملات زیربحث آئے۔ اگرچہ گراسمین نے کہا ہے کہ وہ شمالی وزیرستان آپریشن کے حوالے سے دبا¶ ڈالنے نہیں آئے۔ سفارتی حلقوں نے کہا ہے کہ شمالی وزیرستان آپریشن کے حوالے سے بات چیت ایجنڈے پر بہت ہائی تھا۔ رابطے پر ایک فوجی افسر نے بھی کہا کہ ہو سکتا ہے کہ ملاقات میں شمالی وزیرستان آپریشن پر بھی بات ہوئی ہے۔ یہ معمول کی بات ہے۔ اس افسر کا مزید کہنا تھا کہ واشنگٹن میں یہ تاثر ابھر رہا ہے کہ چونکہ امریکہ میں اگلے ماہ صدارتی الیکشن ہو رہے ہیں اور پاکستان ان کے نتائج کا انتظار کرنا چاہتا ہے اس لئے وہ شمالی وزیرستان میں آپریشن نہیں کر رہا۔ دوسری طرف ایک سابق امریکی سفارتکار جو آجکل پاکستان میں ایک بین الاقوامی تنظیم سے وابستہ ہے نے کہا ہے کہ گراسمین نے پاکستان آرمی چیف کو یہ بتا دیا ہے کہ امریکہ شمالی وزیرستان میں فوری طور پر آپریشن چاہتا ہے۔