ججز بحالی کے باوجود آئینی بحران نظر آرہا ہے: ظفر علی شاہ

21 مارچ 2009 (11:54)
اسلام آباد (محمد نواز رضا/ وقائع نگار خصوصی) مسلم لیگ (ن) کے نائب صدر و ممتاز قانون دان سنیٹر سید ظفر علی شاہ نے کہا ہے کہ ججوں کی بحالی کے باوجود ملک میں آئینی بحران موجود نظر آتا ہے لہٰذا پارلیمنٹ یا پھر چیف جسٹس افتخار چودھری کی سربراہی میں قائم عدلیہ اس بارے میں اپنا فیصلہ کرے۔ انہوں نے یہ بات \\\"نوائے وقت\\\" کو خصوصی انٹرویو دیتے ہوئے کہی۔ سنیٹر ظفر علی شاہ نے کہا ہے کہ وکلاءاور سول سوسائٹی کے ارکان سیاسی جماعتوں کی جدوجہد اور مسلم لیگ (ن) کے قائد محمد نوازشریف کی فہم و فراست و جرا¿تمندانہ سیاسی کردار کی وجہ سے 2 نومبر 2007 ءکی اعلٰی عدلیہ بحال ہوگئی ہے لیکن یہ بات ابھی تک متنازعہ ہے کہ 3 نومبر کے پرویز مشرف کے غیر آئینی اقدامات کی آج آئینی و قانونی حیثیت کیا ہے۔