A PHP Error was encountered

Severity: Notice

Message: Undefined index: category_data

Filename: frontend_ver3/Templating_engine.php

Line Number: 35

ملکی سالمیت کو حکمرانوں سے خطرہ ہے‘ عوام ملک بچانے کے لئے میرے ساتھ مل کر انقلاب لائیں: نوازشریف

20 مئی 2012
حافظ آباد + جلالپور بھٹیاں + خانقاہ ڈوگراں (نمائندہ نوا ئے وقت+نامہ نگار) مسلم لیگ ن کے قائد میاں نواز شریف نے کہا ہے کہ ملکی سالمیت کو حکمرانوں سے خطرہ ہے عوام ملک بچانے کے لئے میرے ساتھ نکل کر انقلاب لائیں۔ اس حکومت کو ایک دھکا اور دیں۔ سپریم کورٹ کے فیصلے کے بعد یوسف رضا گیلانی اب وزیراعظم نہیں رہے، وزیراعظم کو عدلیہ اور عوام کا فیصلہ ماننا ہو گا، اُنہوں نے عوام کا فیصلہ نہ مانا تو عوام کو اپنا فیصلہ منوانا آتا ہے کیونکہ اس سے قبل بھی عدلیہ کی آزادی اور ججز کی بحالی کےلئے عوام اپنا فیصلہ منوا چکی ہے۔ ماضی میں مشرف نے بھی ججز کیساتھ یہی سلوک کیا تھا اور آج موجودہ حکمران بھی وہی کچھ کر رہے ہیں ۔آج ہمیں ان کرپٹ حکمرانوں کیخلاف وہی جدوجہد کرنا پڑ رہی ہے جو ہم نے مشرف کیخلاف کی تھی۔ حافظ آباد میں بہت بڑے جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے میاں نواز شریف نے کہا کہ اگر پاکستان کی بقاءاور سالمیت پر حملہ ہواتو نواز شریف سب سے پہلے مارچ کرے گا۔ اُنہوں نے کہا کہ ہم نے اپنے دور حکومت میںامریکہ کی پراہ کیے بغیر ایٹمی دھماکے کئے جو اُسے پسند نہ تھے اس نے پاکستان پر پابندیاں لگائیں۔ ہمارے دور میں نہ دہشت گردی تھی نہ خود کش دھماکے اور نہ ہی غربت اور بے روزگاری لیکن آج ملک تاریخ کی بد ترین غربت، دہشت گردی، بے روزگاری اور لوڈ شیڈنگ کا شکار ہے، یہ سب کچھ اُس وقت ہوا جب نواز شریف کو جیلوں میں قید کیا گیا اور کال کوٹھریوں میں بند کیا گیا۔ نواز شریف کا یہی قصور تھا کہ ہمارا دور ایک عظیم دور تھا اور پاکستان تیزی سے ترقی کر رہا تھا اور وہ عوام کی بے لوث خدمت کرنا چاہتا تھا۔ ہمارے دور حکومت میں پاکستان اس خطے میں سب سے آگے تھا ۔ہم نے ترقی کی دوڑ میں ہندوستان کو بھی پیچھے چھوڑ دیا تھا ہم ایشیئن ٹائیگر بننے جا رہے تھے۔ وہ دن پاکستان کے سنہری دن تھے جب بھارتی وزیر اعظم خود چل کر ہمارے پاس دوستی کےلئے آئے تھے۔ وہ دن دور نہیں جب حکمرانوں کو شکست فاش ہو گی اور کامیابی عوام کی ہی ہو گی۔ حکمرانوں نے ملک و قوم کو دونوں ہاتھوں سے لوٹا ہے۔ 80/80افراد پر مشتمل لوگوں پر مشتمل وفد برطانیہ لے جائے جا رہے ہیں، شہباز شریف اپنی جیب سے سرکاری دورے کرتے ہیں۔ اُنہوں نے کہا کہ شہباز شریف کی پنجاب حکومت پر کرپشن کے الزام لگانے والے وفاقی وزرا اپنے گریبانوں میں جھانکیں، اسلام آباد میں بیٹھے یہ لوگ کروڑوں اربوں روپے کی کرپشن کر رہے ہیں اور آج جو بھی اینٹ اُکھیڑی جائے کرپشن کا ایک نیا سکینڈل نکلتا ہے۔ ہم پاکستان کو اپنا ملک سمجھ کر اس کی خدمت کر رہے ہیں اس کی ایک ایک پائی ملک و قوم کی امانت ہے۔ ہم اپنے دور اقتدار میں بجلی بھارت کو برآمد کرنے کا سوچ رہے تھے، اُس وقت بجلی کی فی یونٹ قیمت5 روپے تھی لیکن آج لوڈ شیڈنگ کا برا حال ہے بجلی کے بلز پہلے سے بھی زیادہ آ رہے ہیں۔ حکمرانوں نے عوام کو دو وقت کی روٹی کھانے سے بھی قاصر کر دیا ہے۔عزت کی روٹی کمانے والا شخص اپنے بچوں کی فیسیں، بجلی، گیس کے بلز ادا نہیں کر سکتا۔ لیکن دوسری جانب وفاقی وزرا اور مشیروں کے اربوں روپے کے گھپلے منظر عام پر آرہے ہیں،نواز شریف ملک وقوم کیساتھ اتنی بڑی زیادتی برداشت نہیں کر سکتا اور اب ملک میں اُسی انقلاب کی ضرورت ہے جس کا خواب ہم نے 1990ءمیں دیکھا تھا۔ ہم عوام کی طاقت سے اقتدار پر قابض ان غاصب حکمرانوں کو کیفر کردار تک پہنچائیں گے اور انشااللہ یہ جنگ ضرور جیتیں گے۔ نواز شریف اپنی یوتھ کی طرح جوان ہے اور یہ یوتھ ایک نیا خوشحال اور سنہری پاکستان کی بنیاد رکھے گی۔ نواز شریف نے کہا کہ ملکی بقا اور سالمیت خطرے میں ہے حکمرانوں سے جان چھڑانا ضروری ہو گیا اس کےلئے لانگ مارچ سمیت ہر آپشن استعمال کریں گے۔ یہ حکمران ملک کا بھٹہ بٹھا دیں گے۔ آئندہ الیکشن میں مسلم لیگ ن تمام نشستوں پر کامیاب ہو گی۔ انہوں نے کہا حکومت کو بدلو، ایک دھکا اور دو، ہم غاصبوں کو کیفرکردار تک پہنچائیں گے۔ گیلانی استعفی دینے کو تیار نہیں گیلانی مجرم ہونے کے باوجود اپنے عہدہ پر براجمان ہیں۔ جہاں ملک کا مفاد ہو گا ہم ہر چیز سے ٹکرا جائیں گے ملکی سالمیت پر حرف آیا تو نواز شریف سب سے پہلے مارچ کرے گا۔ جلسہ سے ممبر قومی اسمبلی سائرہ افضل تارڑ، اراکان صو بائی اسمبلی چودھری اسداللہ آرائےں، میاں شاہد بھٹی نے خطاب کےا سینٹر پرویز رشید، ایم این اے انوشہ رحمن، نزہت صادق، جنید انور ایم این اے، افضل تارڑ، ایم پی اے میاں شاہد بھٹی اور کارکنوں کی کثیر تعدادد نے بھی جلسہ میں شرکت کی۔ میاں نواز شریف 16سال بعد حافظ آباد آئے اور جلسہ سے قبل وہ سابق وفاقی پارلیمانی سیکرٹری چوہدری افضل تارڑ کی رہائشگاہ کوہلوتارڑ بھی گئے۔ بھاگہ بھٹیاں میں لیگی ورکروں سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ کرپٹ حکومت سے نجات کے لئے عوام تیار رہیں۔ مسلم لیگ کی حکومت آنے پر لوڈشیڈنگ اور مہنگائی کا خاتمہ ہو گا۔ سابق وزیراعظم نے حافظ آباد میں زرعی یونیورسٹی کے قیام اور سڑکوں کی تعمیر کا بھی اعلان کیا انہوں نے کہا شہباز شریف کو حافظ آباد کے لئے شانددا تحفہ دینے کے لئے کہوںگا۔