چینی سفیر کی ملاقات: دھرنا کرپشن کیخلاف ہے‘ سی پیک پر تعاون کرینگے‘ تحفظات کو سنجیدگی سے لیا جائے: عمران

19 اکتوبر 2016

اسلام آباد (اپنے سٹاف رپورٹر سے+ نوائے وقت رپورٹ+ نیوز ایجنسیاں) پاکستان میں عوامی جمہوریہ چین کے سفیر نے بنی گالہ میں چیئرمین تحریک انصاف عمران خان سے ملاقات کی چینی سفیر نے پی ٹی آئی کے سربراہ سے سی پیک منصوبے کے حوالے سے امور پر گفتگو شروع کی تو عمران خان نے دوٹوک کہا کہ اس منصوبے میں میری جماعت اپنی حکومت کے ساتھ ہے، سی پیک کیلئے مغربی روٹی پاکستان کا اندرونی معاملہ ہے جس کیلئے حکومتی پارٹی نے بھی تحریک انصاف کی قرارداد کا ساتھ دیا تھا، مغربی روٹ پر جو موقف تحریک انصاف کا ہے وہی موقف مسلم لیگ ن کی حکومت کے ارکان کا بھی ہے تاہم مسلم لیگ ن کی حکومت ہمارے خلاف یہ چورن بیچ رہی ہے کہ تحریک انصاف سی پیک روکنا چاہتی ہے جبکہ ہمارا 2 نومبر کا احتجاج ہمارے اصولی موقف کا حصہ ہے۔ اس موقع پر چینی سفیر نے انہیں بتایا کہ یہ میری خیرسگالی میٹنگ ہے۔ عمران نے میٹنگ میں شریک شاہ محمود قریشی، نعیم الحق، ڈاکٹر شیریں مزاری سے ان کا تعارف کرایا اور کہا کہ میری جماعت ملکی ترقی کیلئے سی پیک کی مکمل حامی ہے۔ عمران خان نے انہیں سی پیک منصوبوں پر اپنے مؤقف سے آگاہ کیا۔ عمران خان نے چینی سفیر سے کہا کہ سی پیک پر خیبر پی کے حکومت کے تحفظات کو سنجیدگی سے لیا جائے۔ تحریک انصاف کا دھرنا کرپشن کیخلاف اور احتساب کیلئے ہے۔ پاکستان میں جاری چینی منصوبوں کی کامیابی سے تکمیل کے خواہاں ہیں۔ ہمارے احتجاج کا مقصد ملک میں ترقی کی راہ میں رکاوٹ ڈالنا نہیں، سی پیک گیم چینجر منصوبہ ہے، سی پیک پر ہماری مکمل حمایت حکومت کو حاصل ہے۔ اس سے لوگوں کو روزگار ملے گا، خیبر پی کے حکومت اس حوالے سے مکمل تعاون کرے گی۔