لاہور: نامعلوم افراد نے گھر میں گھس کر میاں‘ بیوی اور 2 بچوں کو قتل کر دیا

19 اکتوبر 2016

لاہور (نامہ نگار) نواب ٹاؤن کے علاقہ میں نامعلوم افراد نے گھر میں گھس کر میاں، بیوی کو 2 بچوں سمیت موت کے گھاٹ اتار دیا اور فرار ہو گئے ہیں ۔خاتون اور بچوں کوہو گئے ہیں ۔خاتون اور بچوں کو گلے دبا کر جبکہ خاوند کو تشدداور چھری سے گلا کاٹ کر قتل کیا گیا۔ بتایا جاتا ہے کہ پتوکی کے رہائشی 26 سالہ محمد مالک کی شادی اپنی پھوپھی عابدہ کی 24 سالہ بیٹی آسیہ سے ہوئی تھی۔ انکے دو بچے 5 سالہ بیٹا آصف اور ڈیڑھ سالہ بیٹی مر یم تھے۔ مالک لاہور میں محنت مزدوری کیلئے اپنی بیوی اوردونوں بچوں کے ہمرا ہ نواب ٹاؤن کے علاقہ رسول پورہ میں اپنے ننھیال کے مکان کی تیسری منزل پر کمرے میں رہائش پذیر ہوگیا۔ پیر اور منگل کی درمیانی شب مالک اپنی بیوی اوردونوں بچوں کے ہمرا ہ کمر ے میں فرش پر گدے بچھا کر سو رہا تھا کہ نامعلوم افراد نے کمرے میں گھس کرمالک کو تشدد اورچھری سے گردن پر وار جبکہ آسیہ اور دونوں بچوں آصف اور مریم کو گلے دبا کر قتل کردیا اور موقع سے فرار ہو گئے ۔شبہ ہے کہ انہیں نشہ آور شے کھلا کر بے ہوش کرنے کے بعد قتل کیا گیا۔ اطلاع ملنے پر پولیس کی بھاری نفری موقع پر پہنچ گئی۔ پولیس نے مقتول محمد مالک کے والد محمد عارف کی درخواست پر نامعلوم افراد کیخلاف مقدمہ درج کر کے تفتیش شروع کر دی ہے۔ دریں اثناء موقع پر موجود مرد و خواتین رشتے دار دھاڑیںمارکرروتے رہے۔ مقتول مالک جوہر ٹاؤن میں ایک زیرتعمیر پلازہ میں چوکیداری کرتا تھا۔ ورثاء کے مطابق انکی کسی سے دشمنی نہیں ہے۔ علاوہ ازیں علاقہ میں چار قتلوں کی خونی واردات سے شدید خوف و ہراس پھیل گیا اور موقع پر لوگوں کی بری تعداد اکٹھی ہوگئی۔ علاوہ ازیں ذرائع کے مطابق پولیس نے ایک رشتے دار کو شبہ میں حراست میں لے لیا ہے جس سے پوچھ گچھ جاری ہے۔ علاوہ ازیں وزیراعلیٰ پنجاب محمدشہباز شریف نے نواب ٹائون میں ایک ہی خاندان کے 4 افراد کے قتل کے واقعہ کا نوٹس لیتے ہوئے ڈی آئی جی آپریشنز سے رپورٹ طلب کرلی ہے۔ وزیراعلیٰ نے واقعہ میں ملوث ملزمان کی فوری گرفتاری کا حکم دیتے ہوئے ہدایت کی ہے کہ ملزمان کے خلاف قانونی کارروائی کرکے جاں بحق افراد کے لواحقین کو انصاف کی فراہمی یقینی بنائی جائے۔