حمیرا کے ساتھ گھر بسانا چاہتا ہوں، احمد بٹ ، صلح کا امکان نہیں: حمیرا ارشد

19 اکتوبر 2016

لاہور (کلچرل رپورٹر) گلوکارہ حمیرا ارشد اور ان کے شوہر احمد بٹ ایک دفعہ پھر زندگی کے اس موڑ پر پہنچ گئے ہیں جہاں ان کیلئے فیصلہ کرنا مشکل ہو گیا ہے کہ وہ صلح کریں گے یا علیحدگی اختیار کریں گے۔ اداکار احمد بٹ نے کہا ہے کہ میں نے طلاق کا کیس واپس لے لیا ہے کیونکہ میں گھر بسانا چاہتا ہوں، اب یہ حمیرا ارشد پر منحصر ہے کہ وہ چاہے تو گھر بسا لے اور چاہے تو علیحدگی اختیار کر لے۔ میں نے بچے کے مستقبل اور اپنا گھر بچانے کیلئے طلاق واپس لینے کا اقدام کیا ہے۔ میں نے ایک مولوی صاحب سے اس بارے میں پوچھا ہے تو انہوں نے کہا ہے کہ ایک وقت پر چاہے آدمی چار ہزار دفعہ بھی طلاق دیدے تو وہ ایک دفعہ ہی سمجھی جائے گی۔ میں نے تین دفعہ طلاق ایک ہی وقت میں دی تھی اس لئے صلح کی گنجائش موجود ہے اور میں نے اسے انا کا مسئلہ نہیں بنایا اور صلح کیلئے تیار ہوں۔ اب یہ حمیرا ارشد کی مرضی ہے کہ وہ اگر میرے ساتھ رہنا چاہتی ہیں یا نہیں، اگر نہیں رہنا چاہتیں تو ان کیلئے خلع کا راستہ موجود ہے، کوشش یہی ہے یہ طلاق نہ ہو اور خیرسگالی کے جذبے کے تحت ہی طلاق کا کیس واپس لیا ہے ۔ گلوکارہ حمیرا ارشد نے کہا ہے احمد بٹ کے ساتھ صلح کا فی الحال کوئی امکان نہیں۔ احمد بٹ نے مجھ پر اور میرے خاندان پر بہت سنگین الزامات لگائے ہیں، اب میری فیملی نے فیصلہ کرنا ہے کہ میں نے صلح کرنی ہے یا خلع لینا ہے۔ میں اکیلی کوئی فیصلہ نہیں کر سکتی کہ وہ معافی مانگے اور میں اسے معاف کر دوں اب جو کرنا ہے میری فیملی نے کرنا ہے۔

EXIT کی تلاش

خدا کو جان دینی ہے۔ جھوٹ لکھنے سے خوف آتا ہے۔ برملا یہ اعتراف کرنے میں لہٰذا ...