منی لانڈرنگ ،کک بیکس انکشافات نے شریف خاندان کا پول کھول دیا، جے آئی ٹی انعام الرحمن کو بلائے: عمران خان

19 جون 2017

اسلام آباد + لاہور (نوائے وقت نیوز+ خصوصی نامہ نگار) چیئرمین تحریک انصاف عمران خان کا کہنا ہے کہ منی لانڈرنگ، کک بیکس انکشافات نے شریف خاندان کا پول کھول دیا۔ عمران خان نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ”ٹوئیٹر“ پر اپنے ٹوئٹ میں کہا انعام الرحمان نے شریف خاندان سے متعلقانکشافات کئے۔ انعام الرحمان نے حدیبیہ پیپر ملز اور موٹر وے ایم ٹو سے متعلق انکشافات کئے ہیں۔ جے آئی ٹی سابق افسر انعام الرحمان سے تفتیش کرے۔ انعام الرحمان کو جے آئی ٹی میں ضرور ثبوت دینے چاہئیں۔ عمران خان کا کہنا تھا گاڈ فادر کے وفادار انعام الرحمان کو دھمکیاں دے رہے ہیں، انہیں تحفظ دیا جائے۔ علاوہ ازیں تحریک انصاف کے سینئر مرکزی رہنما فواد چوہدری نے الزام عائد کیا ہے کہ جے ٹی آئی کو کام کرنے سے روکا جارہا ہے، حکومت آئی بی اور دیگر ماتحت اداروں کو اس کے لئے استعمال کر رہی ہے، کمشن کرپشن کے بعد منی لانڈرنگ کرکے شریف خاندان نے دوہرا جرم کیا، جے آئی ٹی 23 جون کوسپریم کورٹ کو اپنی تیسری رپورٹ پیش کرے گی اور ہمیں امید ہے کہ جے آئی ٹی کی آخری رپورٹ کی نوبت ہی نہیں آئے گی، وزیر اعظم تیزی سے نا اہلی کی طرف بھاگ رہے ہیں، ایف آئی اے کے ایک سابق افسر انعام الرحمٰن بتا سکتے ہیں کہ شریف خاندان پیسہ باہر کیسے لے کر گیا، انعام الرحمٰن نے انکشاف کیا ہے کہ1990 میں موٹروے بنانے میں 8 ارب کمیشن لیا گیا، موٹروے ساڑھے آٹھ ارب میں بننی تھی اس کی لاگت کو 22 ارب تک لیجایا گیا، وزیراعظم کے درباریوں کے بیانات کی سی ڈیز سپریم کورٹ کو دیں گے، اب وقت آگیا ہے کہ میٹرو بس، پیلی ٹیکسی اور دانش سکول سارے سکینڈل عوام کے سامنے آئیں۔ ان خیالات کا اظہار فواد چوہدری نے عائشہ چوہدری کے ہمراہ پریس کانفرنس میں کیا، انہوں نے کہاکہ حکومت کے ماتحت اداروں کو استعمال کیا جارہا ہے، شریف خاندان جتنا پانامہ کیس سے نکلنے کی کوشش کررہا ہے اتنا ہی زیادہ اس دلدل میں پھنس رہا ہے، ایسا لگ رہا ہے 22 جون تک ہی حتمی نتیجہ سامنے آ جائے گا، انہوں نے کہا کہ سپریم کورٹ کسی بھی وقت نواز شریف کو نا اہل قرار دے دے گی، منی لانڈرنگ کر کے شریف خاندان نے دوہرا جرم کیا ہے، فواد چوہدری نے کہا کہ عمران خان نے ہنگامی صورتحال سے نمٹنے کی ہدایت کی ہے اور الیکشن کا اعلان کسی بھی وقت ہو سکتا ہے۔