جمہوریت خطرات میں گھری ہے، لگاﺅ رکھنے والے مل کر آواز اٹھائیں: صدر پلڈاٹ

19 جون 2017

اسلام آباد (آئی این پی ) پارلیمانی ادارے پر نظر رکھنے والے غیر سرکاری ادارہ صدر پلڈاٹ احمد بلال محبوب نے کہا ہے کہ جمہوریت خطرات میں گھری ہوئی ہے ، جمہوریت کو موجود صورتحال میں بھی خطرات کے امکانات موجود ہیں ، دوسرے طریقوں سے بھی نقصان پہنچایا جا سکتا ہے ، وزیراعظم کا جے آئی ٹی کے سامنے پیش ہونا بہت اچھی مثال ہے ، ضیاءالحق کے مارشل لاءکے بعد سے اب تک جمہوریت کی کل زندگی 29 سال ایک ماہ 22 دن ہے ، آئندہ سال مارچ میں سینٹ الیکشن کے موقع پر بھی جمہوریت کو خطرات لاحق ہونے کا خدشہ ہے ، تمام جمہوریت سے لگاﺅ رکھنے والے افراد جمہوریت کو لاحق خطرات سے نمٹنے کےلئے مل کر آواز اٹھائیں ۔ نجی ٹی وی کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے احمد بلال محبوب نے کہا کہ پاکستان میں جمہوریت کی راہ میں مختلف اتار چڑھاﺅ آئے کبھی جمہوریت ڈوبی کبھی نکلی ،کبھی فوجی آمریت آئی کبھی دوبارہ بحال ہوئی ، سابق وزیراعظم محمد خان جونیجو کی اسمبلی سے لیکر پرویز مشرف کے اسمبلیوں پر شب خون مارنے تک 14سال6 مہینے اور22 دن کا جمہوریت کا پہلا طویل دورانیہ بنتا ہے جبکہ میر ظفر اللہ خان جمالی کے حلف اٹھانے سے لیکر اب تک کا جمہوری دور 14سال 7 مہینے کا ہوگیا ہے جو کہ پاکستان کی تاریخ کا طویل ترین دورانیہ بنتا ہے ، اس میں کہا جا سکتا ہے کہ جونیجو صاحب اور جمالی صاحب کا دور اگرچہ پوری طرح جمہوری نہیں تھا مگر جب الیکشن ہو کر اسمبلی چل رہی ہو تو اسے جمہوری دور ہی کہیں گے ۔