غزہ میں اسرائیل جارحیت کا سلسلہ پانچویں روزبھی جاری ہے۔ اسرائیلی وزیراعظم نے غزہ پرحملوں میں اضافے کا عندیہ دیاہے۔

18 نومبر 2012 (19:28)
غزہ میں اسرائیل جارحیت کا سلسلہ پانچویں روزبھی جاری ہے۔ اسرائیلی وزیراعظم نے غزہ پرحملوں میں اضافے کا عندیہ دیاہے۔

اسرائیلی لڑاکا طیاروں نے غزہ میں ایک کمپاؤنڈ کوگولا باری کا نشانہ بنایا جس میں القدس ٹی وی سمیت متعدد عمارتیں مکمل طورپرتباہ ہوگئیں، شہرکے مرکزمیں واقع برج الشو پراسرائیلی توپخانے نے تین میزائل فائرکئے، جس سے بارہ منزلہ عمارت کو شدید نقصان پہنچا جبکہ مزید دومعصوم بچے بھی شہید ہوگئے۔
ادھر اسرائیل ریزرو فوجی بھی غزہ کے سرحدی علاقے میں جمع ہونے شروع ہوگئے۔ اسرائیلی کابینہ سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم نیتن یاہو کا کہنا تھاکہ اسرائیل غزہ پر حملوں کادائرہ کار بڑھانے کے لئے پوری طرح سے تیارہے۔
دوسری جانب ریسکیو کے عملے نے پولیس ہیڈکوارٹر کی تباہ حال عمارت میں سے ایک خاتون کو بچالیا۔ اسرائیل کا کہنا ہے کہ اب بھی غزہ میں سینکڑوں اہداف ایسے ہیں جنہیں نشانہ بنانا ضروری سمجھتے ہیں۔ اقوام متحدہ کی تنظیم نے کہا کہ غزہ میں ہسپتال زخمیوں سے بھرے پڑے ہیں اوران ہسپتالوں میں طبی سپلائی ناکافی ہوگئی ہے۔ ادھراسرائیل کے وزیرداخلہ نے اسرائیلی اخبارسے بات کرتے ہوئے اپنے ناپاک عزائم کا اظہارکیا۔ انہوں نے کہا کہ آپریشن پلرآف ڈیفنس کا مقصد غزہ کو پتھرکے زمانے میں واپس بھیجنا ہے جس کے بعد اسرائیل میں اگلے چالیس سال تک سکون رہے گا۔ غیرملکی خبررساں ایجنسی کے مطابق غزہ میں سڑکیں سنسان پڑی ہیں اورفضا جنگی جہازوں اورڈرون طیاروں کی آوازسے گونج رہی ہے۔