”ملک کی متعدد یونیورسٹیوں میں طب کی تعلیم کا آغاز مثبت قدم ہے“

18 نومبر 2012

لاہور (نیوز رپورٹر) ملک کی متعدد یونیورسٹیوں میں طب کی تعلیم کاآغاز ایک مثبت قدم ہے اس سے نہ صرف عطائیت کا خاتمہ ہوگا بلکہ تعلیم یافتہ معالجین میسر آئیں گے اورطب کو فروغ حاصل ہو گا ، قدرتی طریقہ علاج کا مستقبل روشن ہے ان خیالات کا اظہار پاکستان طبی کانفرنس کے مرکزی سیکرٹری جنرل پروفیسر حکیم منصور العزیزنے پاکستان طبی کانفرنس اور ڈیپارٹمنٹ آف ایسٹرن میڈیسن قرشی یونیورسٹی کے اشتراک سے منعقدہ سیمینارسے خطاب کرتے ہوئے کیا ، پروفیسر حکیم محمد اعجاز فاروقی، ڈاکٹر محمد اشرف اور دیگر مقررین نے کہاکہ طب ایک پیغمبرانہ پیشہ ہے، ملکی مسئلہ صحت کے حل کے لئے اس کی سرکاری سرپرستی ضروری ہے۔