پاکستان اور بھارت مذاکرات سے مسائل حل کریں، سیزفائر سنجیدہ خلاف ورزیاں کی گئیں: امریکہ

18 جولائی 2015

واشنگٹن (اے این این+ نیٹ نیوز) امریکہ نے پاکستان اور بھارت کے درمیان سرحدی کشیدگی پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ کنٹرول لائن پر ہماری گہری نظر ہے، دونوں ملک پر امن مذاکرات کے ذریعے مسائل کو باہمی طور پر حل کریں۔ امریکی محکمہ خارجہ کے ترجمان جان کربی نے میڈیا کو معمول کی بریفنگ کے دوران مختلف سوالوں کے جواب دیتے ہوئے کہا کہ امریکہ پاکستان بھارت سرحدی صورتحال سے آگاہ ہے۔ وہاں پیدا ہونے والی صورتحال ہمارے لئے تشویش کا باعث ہے۔ انھوں نے کہا کہ ہم چاہتے ہیں کہ دونوں ملک پر امن بات چیت کے ذریعے مسائل کا باہمی طور پر حل نکالیں۔ ہم پاکستان اور بھارت کے درمیان کشیدگی میں کمی چاہتے ہیں۔ انھوں نے کہا کہ پاکستان بھارت سرحد پر جس قسم کا تشدد دیکھا جارہا ہے وہ دونوں ملکوں اور خطے کے امن کے لئے کسی طور بھی مفید ثابت نہیں ہوسکتا۔ ترجمان نے کہا کہ سرحدی صورتحال پر امریکہ کو تشویش ہے اور وزیر خارجہ جان کیری کی اس صورتحال پر گہری نظر ہے۔ کنٹرول لائن اور ورکنگ باؤنڈری پر سیز فائر کی سنجیدہ خلاف ورزیاں کی گئی ہیں۔ دونوں ملکوں کے درمیان بات حیت کیلئے ہمارا تعاون جاری رہے گا۔