تھرپارکر میں بھوک اور موت نے پھر پنجے گاڑ لئے، 3 بچے جاں بحق

18 جولائی 2015

تھر پارکر(نامہ نگار) تھرپارکر میں غذائی قلت کے باعث بچوں کی اموات کا سلسلہ ایک بار پھر شروع ہوگیا۔ جمعہ کو مٹھی سول ہسپتال میں مزید تین بچے لقمہ اجل بن گئے۔ رواں ماہ غذائی قلت کے باعث جاں بحق بچوں کی تعداد 21 ہوگئی۔ تھر میں موت کا رقص ایک بار پھر شروع ہوگیا۔ خشک سالی کا شکار تھر میں بچے غذائی قلت کے باعث موت کے منہ میں جارہے ہیں۔ مٹھی سول ہسپتال میں مزید تین بچے غذائی قلت کے باعث جاں بحق ہوگئے۔ رواں ماہ مٹھی سول ہسپتال میں مختلف علاقوں سے تعلق رکھنے والے 21 بچے دم توڑ چکے ہیں۔ مٹھی سول ہسپتال سمیت مختلف ہسپتالوں میں سینکڑوں بچے زیر علاج ہیں لیکن ادویات کی کمی اور انتظامیہ کی غفلت کے باعث بچوں کی اموات کی شرح میں مسلسل اضافہ ہورہا ہے۔
تھرپارکر