دیکھو دیکھو کون آیا‘ شیر آیا‘ شیر آیا‘ نیوٹیک کے طلبہ نے وزیراعلیٰ کے حق میں نعرے لگائے بزرگ مریضہ کی شہبازشریف کو دعائیں

18 اگست 2017

لاہور (خصوصی رپورٹر) وزیراعلیٰ محمد شہبازشریف نے پرائم منسٹر یوتھ سکل ڈویلپمنٹ پروگرام کے تحت ہنرمندی کے صوبائی مقابلے 2017ء کے پوزیشن ہولڈرز میں نقد انعامات تقسیم کرنے کی تقریب میں بطور مہمان خصوصی شرکت کی۔ نیشنل ووکیشنل اینڈ ٹیکنیکل ٹریننگ کمیشن (نیوٹیک) کے طلباء و طالبات میں انعامات تقسیم کرنے کی تقریب مقامی ہوٹل میں منعقد ہوئی۔ وزیراعلیٰ نے جب نیوٹیک کے ہونہار طلبہ و طالبات کو پنجاب حکومت کے تعلیمی پروگراموں میں شامل کرنے کا اعلان کیا تو ہال میں موجود تمام لوگوں نے کھڑے ہوکر وزیراعلیٰ کے حق میں نعرے لگائے۔ دیکھو دیکھو کون آیا‘ شیر آیا شیر آیا کے نعروں سے ہال گونج اٹھا۔ وزیراعلیٰ نے اپنی تقریر کا اختتام علامہ اقبال کے اشعار پر کیا؎
تمنا آبرو کی ہے اگر گلزار ہستی میں
تو کانٹوں میں الجھ کر زندگی کرنے کی خو کر لے
نہیں یہ شان خودداری چمن سے توڑ کر تجھ کو
کوئی دستار میں رکھ لے کوئی زیب گلو کر لے
وزیراعلیٰ کے ہیپاٹائٹس فلٹر کلینک کے دورے کے دوران مریضوں نے طی سہولتوں کو سٹیٹ آف دی آرٹ قرار دیتے ہوئے کہا کہ یہاں پر نہ صرف علاج معالجے کی معیاری اور جدید سہولتیں میسر ہیں بلکہ ڈاکٹروں اور دیگر عملے کا رویہ بھی بہت اچھا ہے۔ شہبازشریف ایک بزرگ مریضہ کی بات سننے کیلئے زمین پر بیٹھ گئے۔ بزرگ مریضہ نے وزیراعلیٰ محمد شہبازشریف کے سر پر ہاتھ رکھا اور انہیں دعائیں دیتے ہوئے کہا کہ بیٹا آپ دکھی انسانیت کیلئے جو کر رہے ہو‘ وہ قابل تعریف ہے۔