شیخوپورہ‘ ساہیوال‘ چشتیاں: گھریلو حالات سے تنگ‘ شادی میں ناکامی پر 3 نوجوانوں‘ لڑکی کی خودکشی

18 اگست 2017

شیخوپورہ‘ گوجرانوالہ‘ ساہیوال‘ چشتیاں (نمائندہ خصوصی+ نمائندہ نوائے وقت + نامہ نگاران) مختلف واقعات میں گھریلو حالات سے تنگ‘ عشق میں ناکامی پر 3 نوجوانوں‘ ایک نوبیاہتا لڑکی نے خودکشی کر لی ہے۔ سرگودھا روڈ کی آبادی نبی پورہ میں 25 سالہ نوجوان نے عشق میں ناکامی پر زہریلی گولیاں کھا کر خودکشی کر لی۔ متوفی اعظم اپنی کسی رشتہ دار لڑکی کو پسند کرتا تھا اور دونوں ایک دوسرے کے عشق میں مبتلا تھے‘ تاہم لڑکی کے گھروالوں نے اس رشتہ سے انکار کر دیا جس پر اس نے دلبرداشتہ ہوکر خودکش کر لی۔ چشتیاں کے نواحی گائوں 46 فتح کی اضافی بستی میں نوبیاہتا نجمہ بی بی نے گلے میں پھندا ڈال کر خودکشی کر لی۔ نجمہ کی دوماہ قبل اضافی بستی کے محنت کش سعید کے ساتھ شادی ہوئی تھی۔ ساہیوال کے نواحی چک 53 جی ڈی کے محمد شبیر کے 28 سالہ بیٹے مشتاق احمد نے گھریلو تنازع پر والدین سے جھگڑ کر گندم میں رکھنے والی زہریلی گولیاں کھا لیں جسے بے ہوش کی حالت میں سول ہسپتال لایا گیا مگر وہ دم توڑ گیا۔ گوجرہ کے نواحی چک نمبر 353 ج ب مہدی آباد کے توفیق نے مبینہ طورپر گھریلو جھگڑے سے تنگ آکر قبرستان میں درخت سے لٹک کر موت کو گلے لگا لیا۔