وزیراعلیٰ کی ملتان کڈنی سنٹر کی حالت زار اور ادویات کی عدم فراہمی پر برہمی

18 اگست 2017

وزیراعلیٰ کا ملتان کڈنی انسٹیٹیوٹ کا دورہ‘ ادویات کی عدم دستیابی ‘ بدانتظامی اور صفائی کی ناقص صورتحال پر برہمی‘ ایس ای‘ ایکسیئن اور دیگر عملہ معطل‘ غریبوں کو مفت ادویات نہ ملنا ناقابل برداشت ہے: شہبازشریف
ملتان میں انسٹیٹیوٹ آف کڈنی ڈیزیزز کے دورے کے موقع پر وزیراعلیٰ شہبازشریف نے وہاں کی حالت زار اور مریضوں کو ادویات کی عدم فراہمی کی شکایات پر وہاں کے عملے کو معطل کر دیا۔ وزیراعلیٰ نے ہسپتال میں داخل مریضوں سے بھی ملاقات کی اور انکے مسائل سنے انہوں نے ہسپتال کی حالت بہتر بنانے کی ہدایت کی۔ حکومت پنجاب کی جانب سے غریبوں کو علاج معالجے کی سہولتوں کی فراہمی کے جو اقدام کئے جارہے ہیں وہ لائق تحسین ہیں خاص طور پر مُہلک امراض کے خاتمے کیلئے بہت سے پروگرام جاری ہیں۔ ایسے امراض کے علاج کیلئے خصوصی ہسپتال بھی صوبے بھر میں کام کر رہے ہیں اور یہ ان ہسپتالوں کے عملے اور سربراہوں کی ذمہ داری ہے کہ حکومت کی طرف سے ان پر جو ذمہ داریاں عائد کی گئی ہیں وہ انہیں ایمانداری سے پورا کریں اور مریضوں کو حکومت کی جانب سے علاج مُعالجے کی تمام سہولتوں کی فراہمی یقینی بنائیں۔ غریب عوام کو مفت علاج اور ادویات کی فراہمی ایک اہم اقدام ہے اور اس میں کسی قسم کی کوتاہی نہیں ہونی چاہئے۔ کیونکہ یہ لوگ نجی ہسپتالوں میں مہنگا علاج نہیں کرا سکتے۔ اسی طرح ہسپتالوں کی صفائی‘ تعمیرومرمت اور حالت زار کو بہتر بنانے میں بھی کوئی کوتاہی نہیں ہونی چاہئے۔

EXIT کی تلاش

خدا کو جان دینی ہے۔ جھوٹ لکھنے سے خوف آتا ہے۔ برملا یہ اعتراف کرنے میں لہٰذا ...