ملک دشمنوں کے فلسفے کو نیست و نابود کردیا‘ مصطفی کمال

18 اگست 2017

کراچی (نمائندہ خصوصی) پاک سرزمین پارٹی کے چیئر مین سید مصطفی کمال نے کہا کہ میں پاکستان کی اسٹیبلیشمنٹ سے کہتا ہوں کہ جس طرح سے بلوچستان کے لوگوں کو معاف کیا گیا ہے ایسا ہی پیکج کراچی والوں کو بھی دیا جائے‘ ایم کیو ایم پاکستان برائے فروخت ہے اور ضمیر فروشوں کا مسکن ہے جو بھی ان کو پیسے دے گا یہ ان کیلئے کام کریں گے چاہے نون لیگ ہو یا پیپلز پارٹی‘ ایم کیو ایم پاکستان کی وجہ سے ایم کیو ایم لندن اور بانی ایم کیو ایم پھر سے مضبوط ہوئے ایم کیو ایم پاکستان سے پاکستان کو نقصان ہو رہا ہے ۔بانی ایم کیو ایم کو‘ مجھے آج پاکستان کے لوگوں سے دل کی بات کرنی ہے جس طرح سے اس دفعہ پاکستان کے لوگوں نے بالخصوص کراچی کے لوگوں نے جشن ازادی منائی ہے اس پر انہیں خراج تحسین پیش کرتا ہوں‘ 70 سالوں میں اس طرح کا جشن آزادی کبھی کراچی میں نہیں منایا گیا‘ 13 اگست کو ہماری ریلی میں ہزاروں لوگوں نے شرکت کر کے ملک دشمنوں کے فلسفہ کو نیست و نابود کر دیا ہم ریلی کے روٹ میں لاکھوں لوگوں کے درمیان سے گزرے سب نے ہمارا استقبال کیا ان خیالات اظہار انہوں نے پریس کانفرنس سے خطاب کر تے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہاکہ ایم کیو ایم پاکستان کیلئے ایک ملک دشمن آج بھی بانی و قائد ہے‘ 14 اگست کو یوم سیاہ منانے کا آڈیو پیغام ایم کیو ایم پاکستان کے بانی نے دیا اور کارکنان کو حکم دیا کہ پاکستانی پرچم کو نذر آتش کیا جائے اور ان تمام کاموں کی ویڈیوز بالخصوص بھارتی چینلز کو بھیجی جائیں‘ جشن آزادی کے دن یہ تمام ویڈیوز بھارتی چینلز نے نشر کیں۔ انہوں نے کہاکہ یہ سارا کام بانی ایم کیو ایم مہاجروں کا نام لے کر کر رہا ہے تاکہ باقی قومیتوں سے لڑائے مگر جن کے آبائو و اجداد نے اس ملک کی بنیادیں اپنے خون سے رکھی ہوں وہ کیسے اس شخص کا ساتھ دے سکتے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ الطاف حسین نے مودی کو مخاطب کیا کہ ایک الگ صوبہ بنانے میں ان کی مدد کریں انہوں نے کہاکہ یوم سیاہ نہ منانے اور الطاف حسین کو رد اور تاریخ کے کوڑے کی نذر کرنے پر مہاجروں کو خراج تحسین پیش کرتا ہوں یہ شخص مہاجروں کا نام لے کر گالی بک رہا ہے آج جس مقصد کیلئے میں اور انیس قائم خانی پاکستان آئے تھے وہ پورا ہو گیا۔
مصطفی کمال