عمارتوں کے نقشہ جات،ترقیاتی منصوبوں اور حکومتی معاملات سے رینجرز کا کوئی تعلق نہیں ہے:فرحت اللہ بابر

17 جون 2015 (16:16)
عمارتوں کے نقشہ جات،ترقیاتی منصوبوں اور حکومتی معاملات سے رینجرز کا کوئی تعلق نہیں ہے:فرحت اللہ بابر

اپنے بیان میں فرحت اللہ بابر نے کہا کہ کرپشن کے معاملات اور حکومتی کارکردگی کے مسائل کے بارے میں جاننا اور عملی اقدامات اٹھانا نیب، پیک، اینٹی کرپشن ڈیپارٹمنٹ اور دوسرے اداروں کا کام ہے۔ یہ کام صرف انہیں ہی کرنا چاہیے۔ ان کا کہنا تھا کہ کراچی میں رینجرز کو صرف دہشتگردوں کے خلاف کارروائی کا مینڈیٹ دیا گیا تھا۔ نقاب پوش رینجرز اہلکاروں کے حالیہ چھاپوں نے آرٹیکل ایک سو سینتالیس اور انسداد دہشتگردی ایکٹ کے سیکشن فور کے تحت

پیرا ملٹری فورسز کی کراچی میں موجودگی پر سوالیہ نشان لگا دیا ہے۔ فرحت اللہ بابر نے کہا کہ رینجرز اپنی حدود سے تجاوز کر رہی ہے، اِس کی تحقیقات ہونا ضروری ہیں۔