بلوچستان: ہم جنس پرستی کی بنیاد پر شادی اور معاونت کرنے کے الزام میں چار افراد گرفتار

17 جون 2015

لندن (بی بی سی) صوبہ بلوچستان کے ضلع جھل مگسی میں پولیس نے چار افراد کو ہم جنس پرستی کی بنیاد پر شادی اور اس سلسلے میں معاونت فراہم کرنے کے الزام میں گرفتار کرلیا۔ ضلع کے ہیڈ کوارٹر گنداوہ میں ایک پولیس اہلکار نے بتایا کہ گرفتار ہونے والوں میں دو افراد شامل ہیں جو کہ مبینہ طور پر ہم جنس پرست تھے جبکہ دیگر دو افراد کو ہم جنس پرستوں کو شادی میں مدد فراہم کرنے کے الزام میں گرفتار کیا گیا۔ اہلکار نے کہا کہ دونوں افراد نے حقیقتاً ہم جنس پرستی کی بنیاد پر شادی نہیں کی بلکہ مذاق کیا تھا مگر یہ مذاق اب ان کے گلے میں پڑگیا۔ ہم جنس پرستی کی بنیاد پر بلوچستان کے کسی علاقے سے میڈیا میں رپورٹ ہونے والا یہ پہلا واقعہ ہے۔