مرغی پر ٹیکس واپس، ملازمین کی تنخواہوں میں اضافہ 10 سے 15 فیصد کیا جائے: ارکان سینٹ

17 جون 2015

اسلام آباد (نامہ نگار + اے پی پی) ایوان بالا(سینٹ) میں بجٹ پر بحث کا سلسلہ جاری رہا، اپوزیشن ارکان نے بجٹ کو اعدادوشمار کا گورکھ دھندا جبکہ حکومتی ارکان نے عوام دوست قرار دیا، مختلف سیاسی جماعتوں کے ارکان نے کہا سرکاری ملازمین کی تنخواہوں میں اضافہ 10 سے 15تک فیصد کیا جائے، عوام پر ٹیکسوں کا بوجھ ڈال دیا گیا ہے، بلوچوں کو ان کا حق ملنا چاہیے۔ سینیٹر نجمہ حمید نے کہا سرکاری ملازمین کی تنخواہ میں اضافہ 10 فیصد کیا جائے۔ بجٹ میں مرغی پر جو ٹیکس لگایا گیا ہے وہ واپس لیا جائے۔ زیادہ آمدنی والوں سے ٹیکس وصول کیا جائے، پرائیویٹ سکولوں کی فیسوں پر نظر رکھی جائے۔ سینیٹر الیاس احمد بلور نے کہا خیبرپی کے میں صنعتوں کو ٹیکسوں کا استثنیٰ ملنے سے صنعتوں کو فروغ حاصل ہو گا۔ سینیٹر سحر کامران نے کہا تنخواہوں میں 15 فیصد تک اضافہ کیا جائے۔ میٹرو بس پر جتنا خرچ کیا اس سے کہیں کم میں عوام کا ٹرانسپورٹ کا مسئلہ حل کیا جا سکتا تھا۔ ہمیں دفاع کے لئے زیادہ رقم خرچ کرنے کی ضرورت ہے، ہمیں اپنی سکیورٹی فورسز اور پولیس کو مضبوط کرنا ہے۔ سینیٹر طلحہ محمود نے کہا بجٹ میں بہت سی اچھی چیزیں ہیں لیکن یہ عوامی توقعات کے مطابق نہیں۔ پاک چین، اقتصادی راہداری منصوبہ پر کام شروع نہ ہوا تو یہ بھی کالا باغ ڈیم بن جائے گا۔ بعدازاں سینٹ کا اجلاس آج صبح ساڑھے دس بجے تک ملتوی کر دیا گیا۔ وفاقی وزیر برائے بین الصوبائی رابطہ ریاض حسین پیرزادہ نے کہا خیبر پی کے میں بلدیاتی انتخابات کے حوالے سے جو اعتراضات سینیٹرز کی جانب سے اٹھائے گئے ہیں ان سے اتفاق کرتا ہوں، الیکشن کمیشن نے اپنی رپورٹ میں صوبے میں امن و امان کی ناگفتہ بہ صورتحال کا ذکر کیا ہے، الیکشن کمشن نے اپنی رپورٹ میں کہا ہے کہ صوبائی حکومت کو مرحلہ وار بلدیاتی الیکشن کرانے کی تجویز دی گئی تھی جو مسترد کر دی گئی۔ وہ عوامی نیشنل پارٹی کے سینیٹر الیاس احمد بلور، سینیٹر شاہی سید اور سینیٹر ستارہ ایاز کے توجہ دلائو نوٹس کا جواب دے رہے تھے۔ ایوان بالا میں ایم کیو ایم کے سینیٹر فروغ نسیم کے والد کے انتقال پر فاتحہ خوانی کی گئی۔ اے پی پی کے مطابق سینٹ میں مختلف سیاسی جماعتوں سے تعلق رکھنے والے ارکان نے کہا میٹروبس عام آدمی کا منصوبہ ہے، بجٹ میں کوئی نیا ٹیکس نہیں لگایا گیا، بلوچوں کوان کا حق ملنا چاہئے۔ افواج پاکستان کو کامیابی سے آپریشن ضرب عضب کا ایک سال مکمل ہونے پر خراج تحسین پیش کرتے ہیں۔