کندیاں، اوکاڑہ، ساہیوال، حویلی لکھا : تین بچوں کے باپ سمیت 4 افراد کی خودکشی

17 جون 2015

کندیاں + اوکاڑہ + ساہیوال + حویلی لکھا (نامہ نگاران) مختلف واقعات میں 3 بچوں کے باپ سمیت 4 افراد نے گھریلو جھگڑوں سے دلبرداشتہ ہو کر زندگی ختم کر لی۔ کندیاں کے نواحی علاقہ گھنڈی میں 35 سالہ نوجوان نے گھریلو جھگڑے پرزہریلی گولیاں کھا کر خودکشی کر لی۔ نور زمان کوتشویشناک حالت میں میانوالی ڈی ایچ کیو ہسپتال لے جایا گیا جہاں وہ چند گھنٹے بعد دم تو ڑگیا۔ تھانہ حویلی لکھا کے علاقہ شکور آباد میں سعید نے گھر والوں سے جھگڑے کے بعد دلبرداشتہ ہو کر گندم میں رکھنے والی زہریلی گولیاں کھا لیں جس کو ہسپتال منتقل کیا گیا جہاں وہ دم توڑ گیا۔ ساہیوال میں پسند کی شادی نہ ہونے پر نوجوان نے زہر کھا کر خودکشی کر لی۔ چک 6/86 آر کے فیصل نے والدین سے اپنی پسند کی شادی کرنے کا مطالبہ کیا لیکن وہ نہ مانے جس پر نوجوان دلبرداشتہ ہو گیا اور زہریلی گولیاں کھا کر زندگی کا خاتمہ کر لیا۔ حویلی لکھا میں تین جوان بیٹوں کے 48 سالہ باپ نے پھندا لے کر زندگی ختم کر لی۔ محلہ شکور آباد کے لالہ مقصود کو اہل خانہ نے ابتدائی لمحات میں ہی پھانسی کی رسی سے اتار لیا اور سانس چل رہی تھی تاہم لاہور ہسپتال لیجاتے راستے میں دم تو ڑگیا۔