سیاسی اختلاف کو تصادم بننے سے بچانا ہوگا، ساجد نقوی

17 جولائی 2017

اسلام آباد (وقائع نگار خصوصی) قائد ملت جعفریہ پاکستان اور اسلامی تحریک پاکستان کے سربراہ علامہ سید ساجد علی نقوی نے کہا ہے ملک پہلے ہی مختلف مسائل کا شکار ہے، مزید کسی بحران کا متحمل نہیں ہوسکتا، جے آئی ٹی رپورٹ کے بعد مختلف آرا سامنے آئیں جوجمہوری معاشرے کی عکاس ہیں ، سیاسی اختلاف کو سیاسی تصادم سے بننے سے بچانا ہوگا، پاکستان کے اصل مسائل دہشتگردی،ناانصافی،غربت ، بے روزگاری ہے ، ملکی استحکام کےلئے سیاسی و ذاتی مفادات سے بالاتر ہوکر غور کرنے کی ضرورت ہے، اسلامی تحریک پاکستان عام انتخابات میں حصہ لے گی، ہم خیال جماعتوں کے ساتھ اتحاد پر بھی غور کیا جارہاہے انہوں نے ےہ بات اسلامی تحریک پاکستان کی سینٹرل ایگزیکٹو کمیٹی ک کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہی ملک کی موجودہ سیاسی و امن وامان کی صورتحال کے حوالے سے اہم اجلاس قائد ملت جعفریہ پاکستان و اسلامی تحریک پاکستان کے سربراہ علامہ سید ساجد علی نقوی کی زیر صدارت ہوا۔ اجلاس میں سینٹرل ایگزیکٹو کمیٹی کے ممبران نے شرکت کی۔ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے قائد ملت جعفریہ پاکستان علامہ سید ساجد علی نقوی کا کہنا تھا کہ اسلامی تحریک پاکستان کے ذمہ دارروں آئندہ قومی انتخابات سے قبل سیاسی طور پر حلقوں میں جانا چاہیے وہاں رابطہ عوام مہم کے ذریعے عوام میں شعور کو بیدار کرنا چاہیے اور سیاسی منظر نامے کے تناظر میں سیاسی بحث و مباحثہ اور الیکچر کے ذریعے سیاسی استعداد کو بڑھائے جائے تاکہ آئندہ انتخاب سے قبل عوام کو انتخابات میں بھرپور مہم چلا کر درست سمت میں رہنمائی فراہم کی جا سکے۔