قبل ازوقت عام انتخابات کا کو ئی امکان نہیں‘ یوسف رضاگیلانی

17 جولائی 2017

کراچی(اسٹاف رپورٹر)سابق وزیراعظم اور پاکستان پیپلزپارٹی کے مرکزی رہنماسید یوسف رضاگیلانی نے کہاہے کہ ملک میں قبل ازوقت عام انتخابات کا کوئی امکان نہیں ہے۔ میں یہ نہیں چاہتاکہ میری طرح وزیر اعظم کو ہٹایا جائے لیکن میاں صاحب پر سنگین الزامات ہیں،وزیر اعظم کے استعفے پر پارٹی پالیسی سے متفق ہوں۔اتوارکوکراچی کے علاقے چنیسرگوٹھ میں پیپلزپارٹی کے رہنما سعید غنی کی رہائش گاہ پرمیڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے یوسف رضاگیلانی نے کہاکہ موجودہ سیاسی صورتحال میں پیپلزپارٹی سب سے زیادہ متحرک ہے ہم نے عدلیہ کا احترام کیا۔انہوں نے کہاکہ اداروں کی بقا کا خیال کرنا چاہئے میں نے اپنے کیس میں اپیل کی نہ لڑائی کی اگر اداروں میں تصادم ہوا تو کچھ نہیں بچے گا۔انہوں نے کہاکہ عدلیہ سے امید ہے وہ بروقت فیصلے کرے گی تاکہ اداروں میں تصادم کی صورتحال پیدا نہ ہو ۔سابق وزیراعظم نے کہاکہ میرا کرپشن کا کیس نہیں تھا۔ ہمارے اوپر آئین کی پاسداری لازمی ہے ۔میں یہ نہیں کہتا کہ جو میرے ساتھ ہوا وہ سب کے ساتھ ہو لیکن عدلیہ کا فیصلہ بھی ماننا چاہیے۔انہوں نے کہاکہ پانامہ کیس میں سپریم کورٹ کے ابتدائی فیصلے پر دونوں فریقین نے مٹھایاں بانٹی تھی ۔فیصلے ہمیشہ کسی کے حق اور کسی کے خلاف آتے ہیں۔۔تصادم کی صورتحال پیدا کرنے کے بجائے عدالتوں کے فیصلے تسلیم کرنے چاہئیں ۔ہم نے بھی عدالتوں اور اداروں سے تصادم کے بجائے فیصلے تسلیم کئے تھے ۔اداروں سے تصادم کسی کے مفاد میں نہیں ہے۔سابق وزیر اعظم نے سعید غنی کو ضمنی انتخاب جیتنے پر مبارکباد بھی دی ۔اس موقع پر سعید غنی نے کہاکہ پی ایس 114کے انتخاب میں مجھ پر جو ایم کیوایم کی جانب سے دھاندلی کا الزام لگایا گیا ہے وہ غلط ہے، ضمنی انتخاب میں پتنگ ، بلے اور شیر سمیت سب کو آﺅٹ کیا آئندہ الیکشن میں کراچی کا منڈیٹ پیپلزپارٹی کے پاس ہوگا۔