16 گھنٹے تک جا پہنجچا جس میں شہری بلبلا اٹھے گیس کی بندش بھی جاری

17 جولائی 2017

اسلام آباد (وقار عباسی سے) اسلام آباد میں 1311 سرکاری رہائش گاہوں پر غیر قانونی طور پر قبضہ کرلیا گیا ہے وزارت ہاوسنگ کے زیر انتظام سٹیٹ آفس کے 731گھر، سی ڈی اے کے 300، پی ٹی سی ایل کے 80، پولیس کے 129 اور دیگر پر گزشتہ کئی برسوں سے قبضہ ہو چکا ہے حکام غیرقانونی قبضے کے خلاف تاحال کوئی بھی سنجیدہ اقدام نہیں اٹھا سکے۔ نوائے وقت کو دستیاب دستاویزات کے مطابق اسلام آباد میں سرکاری رہائش گاہوں پر قبضوں کا معاملہ کافی سنگین ہوتا جا رہا ہے۔ رپورٹ کے مطابق درجنوں گھر ایسے بھی جن پر پرائیویٹ افراد نے قبضہ کررکھا ہے تاہم ان کے خلاف کئی سال گزرنے کے باوجود تاحال کوئی کاروائی عمل میں نہیں لائی جا سکی۔ غیر قانونی قابضین میں اسلام آباد کی پولیس اور وزارت داخلہ کے ملازمین نے بھی اپنا بھر پور حصہ ڈالا ہے اور 129 سرکاری رہائش گا ہیں جو آبپارہ میں واقع ہیں ان پر انہوں نے غیر قانونی طوپر قبضہ کر رکھا ہے۔ رپورٹ میں قرار دیا گیا ہے وفاقی ترقیاتی ادارے (سی ڈی اے) میں بھی لاقانونیت اپنے عروج پر ہے جہاں 300 سرکاری گھروں پر ٹریس پاسرز نے قبضہ کرلیا ہے۔ واضح رہے وزیراعظم کی ہدایت پر سیکرٹری کیبنٹ ندیم حسن آصف کی نگرانی میں ان سرکاری گھروں پر غیر قانونی قبضہ کرنے والوں کے خلاف کاروائی کی جا رہی ہے تاہم کمیٹی بھی گزشتہ ایک سال سے کوئی سرکاری رہائش گاہ تاحال خالی نہیں کرا سکی ہے۔
ھنٹے تک جا پہنجچا جس میں شہری بلبلا اٹھے گیس کی بندش بھی جاری