این اے 260 ضمنی الیکشن میں دھاندلی ہوئی، تحقیقات سے قبل نتیجہ جاری نہ کیا جائے: فتح محمد، مدد جتک

17 جولائی 2017

کوئٹہ (بیورو رپورٹ) پیپلز پارٹی بلوچستان کے صوبائی صدر حاجی علی مدد جتک سینٹ میں ریلوے کی سٹینڈنگ کمیٹی کے چیئرمین سابقہ وفاقی وزیر و سینیٹر سردار فتح محمد حسنی نے کہاہے کہ این اے 260 کے ضمنی انتخابات میں قطری شہزادے کے منشی کا پیسہ استعمال کیا گیا ہے اور 30 ہزار بوگس ووٹ ڈالے گئے۔ ہم چیف الیکشن کمشنر اور چیف جسٹس سپریم کورٹ سے اپیل کرتے ہیںکہ این اے 260کے نتائج کا اعلان اس وقت تک نہ کیا جائے جب تک انٹرنیشنل میڈیا کے سامنے اس حلقے میں ہونے والی پولنگ میں جو بیلٹ پیپر جو استعمال کئے گئے اسکی تحقیقات نہیں ہوتی۔ انہوں نے یہ بات اتوار کے روز کوئٹہ پریس کلب میں پارٹی کے صوبائی جنرل سیکرٹری اقبال شاہ، پارٹی کے صوبائی سیکرٹری اطلاعات سردار بلند خان جوگیزئی، پارٹی کے مرکزی رہنما لالہ یوسف اور دیگر پارٹی کے عہدیداروںکے ہمراہ ہنگامی پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہی۔ سینیٹر سردار فتح محمد حسنی نے کہاکہ گزشتہ چند ماہ سے اخبارات اور نجی ٹی وی میں ہمارے پارٹی اور ہمارا میڈیا ٹرائل کیا جا رہا ہے جس کی ہم شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہیں ہمیں ایک سازش کے تحت ہرایا گیا ہے ہم جلد ہی اپنے قبائلی عمائدین اور پارٹی کی قیادت سے مشور ے کے بعد کوئٹہ شہر اور دیگر علاقوں میں روڈ بلاک کریںگے ہم کسی قربانی سے دریغ نہیں کریںگے جو تیس ہزار ووٹ ہمارے خلاف استعمال کئے گئے ہیں، اسکے بارے میں تحقیقات کی جائے۔ انہوںنے کہاکہ حلقہ پی پی 5 اور 6 سے پیپلز پارٹی کو ووٹ نہ ملے یہ ہو نہیں سکتا سوشل میڈیا پر ہمارامیڈیا ٹرائل کیا جا رہا ہے۔ انہوں نے کہاکہ نوشکی، دالبندین اور دیگر علاقوں میں میرے ووٹروں کو ووٹ نہیں ڈالنے دیا گیا اور 30 ہزار بوگس استعمال کئے گئے جو ہم کسی صورت میں قبول نہیں کریںگے۔ حاجی علی مدد جتک نے کہا کہ 2017ء کے ضمنی انتخابات میں جس طرح دھاندلی کی گئی ہے ہمیں اندازہ ہوگیا ہے کہ 2017ء یا 2018ء کے انتخابات میں بھی یہی کچھ ہوگا، ہم کسی صورت میں برداشت نہیں کریںگے کہ ہمارے خلاف انتقامی کارروائی کی جائے اور ہم خاموش رہے ہم سخت سے سخت جواب دیںگے۔ دریںاثنا ڈپٹی چیئرمین سینٹ و جمعیت علماء اسلام کے مرکزی سیکرٹری جنرل مولانا عبدالغفور حیدری نے کہا کہ قومیت پرستی کے نا م پر ووٹ لینے والوں کو عوام نے مستر د کردیا ہے۔ نفرت کی سیاست نے بلوچستان کو تباہی کے دہا نے پر لا کر کھڑا کردیا ہے۔ این اے 260 کے ضمنی انتخاب میں جمعیت علما ء اسلا م کی فتح نے ثابت کیا کہ جمعیت بلوچستان کی سب سے مقبول جماعت ہے اور آئند ہ الیکشن میں جمعیت علماء اسلام بلوچستان میں حکو مت بنائے گی ،یہ با ت انہوں نے اتوار کو قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 260 کے ضمنی انتخاب میں کامیاب ہونے والے جمعیت علما اسلام کے امیدوار انجینئر عثمان بادینی کی گھر آمد کے موقع پر صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہی۔ انہوں نے کہا کہ جمعیت علما ء اسلام وہ واحد جماعت ہے جو بلوچستان میں تما م اقوام اور قومیتوں میں یکسر مقبول ہے اور سب کے حقوق کی بات کرتی ہے، انہوں نے کہا کہ قوم پرستی کے نام پر ووٹ لینے والوں کو عوام نے مسترد کردیا۔ دریں اثنا صوبائی الیکشن کمشن بلوچستان نعیم مجید جعفر نے پیپلز پارٹی کی جانب سے دھاندلی کے الزامات کو مسترد کردیا ہے اور کہا ہے کہ اس طرح کے الزامات ہر انتخابات کے بعد لگائے جاتے ہیں ہم نے اپنے ذمہ داری پوری ایمانداری سے نبھائی ہے۔ انہوں نے یہ بات اتوار کے روز میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کہی۔