سی پیک ہما ری ترقی کی منزل ہے

17 جولائی 2017
سی پیک ہما ری ترقی کی منزل ہے

سی پیک معاہدہ پاکستان کی ترقی اور عوام کی خو شحالی کیلئے اللہ تعالیٰ کا بھر پور انعام ہے مو جو دہ حا لات میں پاکستان میں دنیا کی بڑی طا قت چین کو پاکستان کا مخلص دوست بنا نا اور اسے اربو ں ڈالر ز کی ترقیاتی منصبو بو ں کیلئے فراہمی ایک نا قابل فرامو ش حقیقت ہے پاکستان کیلئے چین کی اتنی بڑی سر ما یہ کاری او ر اقوام متحدہ میں پاکستان مخالف قرار دادوں کو VETO کرنے سے دو نو ں کے ممالک کے درمیا ں روشنی کے رشتے مستحکم تر ہو گئے ہیں ۔ پاکستان کے اندرونی اور بیر ونی دوست خوش ہیںلیکن ہمارے روایتی حریف ایک بار پھر پاکستان پر قدرت کی انمو ل عنا یا ت کے دشمن بنتے جارہے ہیں ہمارے یہ دشمن اندرو ن و بیر ون ملک پاکستان کو نقصان پہنچا نے کی کو شش میں مصروف اور صف بند یو ں کی تیا ری میں ہیں اب ان سے ہوتا کچھ نہیں یہ با زو آزما ئے جا چکے پاکستان کی مسلح افواج انکے ہروارکا جو اب بھر پور انداز سے دے کر انکے تو پوں کے منہ کو خا مو ش ہی نہیں کراتی بلکہ دشمن کی صفوں میں کھلبلی مچا دیتی ہے بھا ر ت نے1971 میں پاکستان تو ڑا اس کارو بار میں اعانت کر نے والوں کو بھی بے نقاب کردیا ۔سی پیک سے بھا رتی پر چم تلے جمع ہونے والے خوف میں مبتلا ہیں کہ کہیں پاکستان ا ن کی دنیا میں شر ارتوں کا خا تمہ کر کے ان کی ٹھیکیداریو ں کو ہمیشہ کیلئے ختم نہ کر دے ۔ اس وقت 1971 کے حالا ت نہیں پاکستان ایٹمی توا نا ئی سے آراستہ ہے ۔ ایٹمی طا قت پاکستان کی شان سے بہا در مسلح افواج اس آن ہیں اور جرا ءت و بہا دری کے شاندار کا رنا مے رقم کر چکی ہیں ان کو پا کستانی قوم کی ہر لمحہ حما یت حا صل ہے بھا رت اب اپنے معاملات میں تبدیلی کر کے بحیثیت پڑوسی ملک کے ایک شہر ی کے مشورہ ہے کہ کشمیر یو ں کو اقوام متحدہ کی قرار دادوں کی روشنی میں اپنی آزادی کا فیصلہ کرنے دے سی پیککی مخالفت تر ک کر دے پاکستان سے تما م معاملا ت پر بیٹھ کر با ت چیت کرے اور ان کا حل تلا ش کرے خو د بھی جیو اور دوسروں کو بھی جینو دو کی پا لیسی پر عمل کر ے ۔ پاکستانی افواج پاکستانی عوام اس بات پر متفق ہیں کہ سی پیک کی مجو زہ تجاویز پر فی الفور عمل در آمدکر کے پاکستان کو ترقی کی منزل کی جا نب رواں دواں کر دیا جا ئے کے چین کے ہر میدان میں پاکستان کی معاونت اور مدد تاریخ پاکستان کا اہم باب ہے اس پر کوئی دہا ئی کا رگر نہیں ہو گی ۔ (صغیر علی صدیقی۔ کراچی)