ڈی جی خان : قندیل بلوچ سپرد خاک، ملزم وسیم کا 3روزہ جسمانی ریمانڈ

17 جولائی 2016 (19:31)

ملتان میں اپنے بھائی کے ہاتھوں غیرت کے نام پر قتل ہونے والی ماڈل قندیل بلوچ کو ان کے آبائی علاقے شاہ صدر الدین کے قبرستان میں سپرد خاک کردیا گیا ہے۔تفصیلا ت کے مطابق قندیل بلوچ کی میت علی الصبح نشتر ہسپتال ملتان میں ورثا کے حوالے کی گئی جہاں سے میت کو ایمبولنس کے ذریعے ڈیرہ غازی خان منتقل کیا گیا۔ ڈیری غازی خان میں قندیل بلوچ کی نماز جنازہ ادا کی گئی جس میں ان کے اہل خانہ کے علاوہ مقامی افراد کی بڑی تعداد نے بھی شرکت کی، نماز جنازہ کے بعد قندیل بلوچ کو ان کے آبائی علاقے شاہ صدر الدین کے قبرستان میں سپرد خاک کردیا گیا ہے، اس موقع پر سکیورٹی کے بھی سخت انتظامات کئے گئے تھے۔ واضح رہے کہ گزشتہ روز قندیل بلوچ کو اس کے بھائی وسیم نے غیرت کے نام پر قتل کردیا تھا جبکہ پولیس نے وسیم کو گرفتار کر کے اس کے خلاف قانونی کارروائی شروع کردی ہے۔ وسیم کو عدالت میں پیش کیا گیا جہاں عدالت نے اسے 3روزہ ریمانڈ پر پولیس کے حوالے کر دیا۔ ماڈل قندیل بلوچ کی میت آبائی علاقے شاہ صدرالدین پہنچنے پر اس کی والدہ نے علاقائی روایات کے مطابق قندیل بلوچ کے ہاتھ اور پاﺅں پر مہندی لگائی۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ علاقے کی روایت کے مطابق بے گناہ قتل ہونیوالی عورت کی میت کو دونوں ہاتھ اور پاؤں پر مہندی لگائی جاتی ہے جبکہ مرد کی میت کو گانی باندھی جاتی ہے۔