بیت المقدس فوجی چھائونی میں تبدیلی، نمازیوں کو شدید مشکلات کا سامنا

17 جولائی 2016

مقبوضہ بیت المقدس (اے این این) اسرائیلی فوج کی بھاری نفری نے بیت المقدس کو فوجی چھانی میں تبدیل کردیا اور مسجد اقصی کے اطراف میں جگہ جگہ رکاوٹیں کھڑی کرکے شہریوں کو قبلہ اول میں نماز کے لیے آنے سے روکنے کی مذموم مہم جاری ہے۔ فلسطینی میڈیا رپورٹس کے مطابق جمعہ کے روز علی الصبح ہی سے اسرائیلی فوج کی بھاری نفری نے مسجد اقصی کی طرف آنے والے تمام راستے بند کردیے۔ جگہ جگہ ناکے لگا کر شہریوں کو قبلہ اول میں آنے سے روکنے کے لیے ان کی شناخت پریڈ کا سلسلہ دن بھر جاری رہا۔عینی شاہدین کا کہنا ہے کہ اسرائیلی فوج اور فلسطینی نمازیوں کے درمیان آنکھ مچولی جاری رہی۔