ننکانہ: جائیداد کے تنازعہ پر کزن کو شادی سے ایک روز قبل قتل کر دیا

17 جولائی 2016

ننکانہ صاحب(نامہ نگار)جائیداد کے تنازعہ پر تین ساتھیوں کے ساتھ ملکر حقیقی کزن کو فائرنگ کرکے موت کے گھاٹ اتاردیا، مقتول وسیم اختر کی آج شادی تھی۔ تفصیلات کے مطابق نواحی گائوں چک نمبر 6 گ ب کے رہائشی حاجی محمد یعقوب نے اپنے بھائی حاجی محمد یوسف کی بیوی کے فوت ہونے پر اس کے بیٹے وسیم اختر کوگود میںلے لیا حاجی محمد یوسف نے دوسری شادی کر لی جو بعد میں سعودی عرب میں وفات پاگیا وسیم اختر کی آج اتوار کے روز شادی تھی وہ لاہور اپنے دوست حذیفہ کے ساتھ شادی کی شاپنگ کرنے گیا واپسی پر اپنی بہن افشاں اور 11سالہ بھانجے رضا کولیکر واپس گائوں آرہا تھا جب ان کی کار گائوں کے قبرستان کے قریب رات ڈیڑھ بجے پہنچی تو چچا محمد سلیم کے بیٹے محسن سلیم نے اپنے دیگر تین نامعلوم ساتھیوں کے ہمراہ زبردستی کار کو روک لیا اور ان پر فائرنگ کردی جس کے نتیجہ میں وسیم اختر اور حذیفہ کو گولیاں لگ گئیںوسیم اختر زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے موقعہ پر ہی دم توڑ گیا جبکہ حذیفہ کو زخمی حالت میں ڈسٹرکٹ ہسپتال ننکانہ داخل کرادیا گیا۔ پولیس تھانہ صدر ننکانہ صاحب نے حاجی محمد یعقوب کی مدعیت میںاس کے لے پالک بیٹے وسیم اختر کے قتل کے مرکزی ملزم محسن سلیم اور اس کے والد محمد سلیم سمیت دیگر نامعلوم افراد کے خلاف مقدمہ درج کر لیا۔ مدعی مقدمہ حاجی محمد یعقوب نے ایف آئی آر میں الزام عائد کیا ہے کہ مقتول وسیم اختر کی دادی نے تمام جائیداد وسیم اختر کے نام کر رکھی تھی جس کا ملزمان کو رنج تھا۔