لوڈ شیڈنگ جاری ، سسٹم اوورلوڈ ہونے سے ٹرپنگ میں اضافہ ، گرمی، حبس سے شہریوں کا برا حال

17 جولائی 2016

لاہور (نیوز رپورٹر+ نامہ نگاران) گرمی کی شدت اور حبس میں اضافے کے بعد بجلی کی تقسیم کار کمپنیوں کا سسٹم جواب دینے لگا۔ لیسکو سمیت پنجاب کی دیگر تقسیم کار کمپنیوں کا سسٹم اوورلوڈ ہوگیا اور ٹرپنگ میں بھی اضافہ ہوگیا۔ مجموعی طور پر بجلی کا خسارہ 4600 میگا واٹ ہے جس کو پورا کرنے کیلئے 8 گھنٹے شہروں اور دیہات میں 10 گھنٹے تک بجلی بند کی جائیگی۔ صوبائی دارالحکومت میں لیسکو بھی شٹر پول کے تحت بجلی بند کررہا ہے۔ لاہور اور اسکے مضافات میں صارفین کو مسئلہ ٹرانسفارمرز کے چلنے کا آ رہا ہے جو بجلی کی بندش کے دورانیے میں اضافہ کر رہا ہے۔ شہریوں نے چیف ایگزیکٹو لیسکو سے اس صورتحال کا نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے۔ لیسکو کا بجلی کا خسارہ 8 سو میگا واٹ ہے۔ علاوہ ازیں تاندلیانوالہ‘ کمالیہ‘ ڈونگہ بونگہ‘ پھلروان‘ وہاڑی اور ملکوال سمیت کئی شہروں میں غیراعلانیہ لوڈشیڈنگ کا سلسلہ جاری ہے‘ گرمی اور حبس سے لوگوں کا برا حال‘ پانی بھی نایاب‘ کاروبار ٹھپ ہو کر رہ گئے۔ شدید گرمی اور حبس نے باعث شہریوں نے دیہات کے ٹیوب ویلوں پر جا کر اور کھلی جگہوں پر وقت گزارا۔ پھلروان میں بجلی کی غیراعلانیہ لوڈ شیڈنگ سے عوام تنگ آگئے۔ وہاڑی میں شدید گرمی اور حبس میں لوڈشیڈنگ کی وجہ سے عوام پریشان ہیں۔ گرمی سے شہری بلبلا اٹھے‘ رات جاگ کر گزاری۔ گرمی‘ حبس سے خواتین‘ بچے اور بوڑھے تڑپتے رہے۔ حافظ آباد سے نامہ نگار کے مطابق شہریوں نے 20، 20 گھنٹے کی غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ کیخلاف یہاں فوارہ چوک میں احتجاجی مظاہرہ کیا جس کی قیادت محمد طارق نے کی۔ گکھڑ منڈی سے نامہ نگار کے مطابق مسلسل 14 گھنٹے بجلی کی بندش پر اہل علاقہ نے شدید احتجاج کیا۔ ٹرانسفارمر نصب ہونے پر منتشر ہوگئے۔