یوکرائن میں فوج اور علیحدگی پسندوں کے درمیان طے ہونے والے امن معاہدہ کے باوجود دونوں فریقوں نے مشرقی علاقوں سے بھاری اسلحہ ہٹانے سے انکار کردیا

17 فروری 2015 (18:25)
یوکرائن میں فوج اور علیحدگی پسندوں کے درمیان طے ہونے والے امن معاہدہ کے باوجود دونوں فریقوں نے مشرقی علاقوں سے بھاری اسلحہ ہٹانے سے انکار کردیا

خبر ایجنسی  کےمطابق یوکرائنی فوج نے کہا ہے کہ وہ مشرقی یوکرائن کے محاذوں سے بھاری اسلحہ نہیں ہٹائے گی،،کیونکہ علیحدگی پسند باغی منسک معاہدے پر مکمل عمل درآمد نہیں کر رہے ہیں۔ یوکرائن کے فوجی ترجمان آندرے لیشینکو نے خبر ایجنسی کو بتایا کہ اتوار کےروز سے نافذ العمل ہونے والے امن معاہدے کے باوجود باغی مسلسل حملے کر رہے ہیں۔ انہوں نےکہا کہ اس دوران پانچ سکیورٹٰی اہلکار ہلاک جب کہ پچیس زخمی ہو چکے ہیں،،دوسری جانب علیحدگی پسندوں نے یوکرائن حکومت پر الزام عائد کیا ہے کہ وہ فائر بندی کی خلاف ورزی کر رہی ہے۔ باغیوں کے مطابق وہ مرکزی محاذوں سے اس وقت تک بھاری اسلحہ واپس نہیں لے جائیں گے، جب تک منسک  امن معاہدے پر مکمل عمل درآمد نہیں کیا جاتا۔