جی ایس پی پلس کے باوجود برآمدات کا حجم نہیں بڑھ سکا: اقتصادی ماہرین

17 فروری 2015

لاہور (کامرس رپورٹر) اقتصادی ماہرین نے کہا ہے کہ حکومت کی جانب سے مراعات دینے اور یورپی یونین کی جانب سے جی ایس پی پلس سٹیٹس ملنے کے باوجود برآمدات کا حجم 2011 میں ہونے والی 25 ارب ڈالر کی برآمدات کے حجم سے نہیں بڑھ سکا جبکہ درآمدات میں اضافہ جاری ہے جس کے باعث رواں مالی سال 2014-15 کے پہلے سات ماہ میں پاکستان کو 13 ارب ڈالر سے زائد کا خسارہ پہنچا ہے۔ اس امر کا اظہار انسٹی ٹیوٹ آف اسلامک بنیکنگ اینڈ فنانس کے چیئرمین ڈاکٹر شاہد حسن صدیقی اور معروف ماہر اقتصادی ڈاکٹر میاں محمد اکرم نے کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ تجارتی خسارے پر قابو پانے کے لئے حکومت غیرضروری برآمدات کو بند کرے۔