درآمدی ڈیوٹی زیادہ ہونے کے باعث پاکستانی ٹیکسٹائل سیکٹر کو ترجیح نہیں دے سکتے: جاپانی سفیر

17 فروری 2015
درآمدی ڈیوٹی زیادہ ہونے کے باعث پاکستانی ٹیکسٹائل سیکٹر کو ترجیح نہیں دے سکتے: جاپانی سفیر

راولپنڈی (صباح نےوز) پاکستان میں جاپان کے سفیر ہیروشی انوماتا نے کہا ہے جاپان پاکستان کے ساتھ کاروباری سرگرمیوں کے فروغ کے لئے ہر ممکن تعاون کرے گا اور دونوں ممالک کے مابین تجارتی روابط کو بڑھانے کی ضرورت ہے، اس کیلئے جاپان پاکستان کی بھرپور مدد کریگا۔ امن و امان کی صورتحال کے باعث جاپانی کاروباری برادری پاکستان میں سرمایہ کاری سے کترا رہی ہے، جاپان ٹیکسٹائل کا بہت بڑا درآمد کنندہ ہے لیکن پاکستان میں درآمدی ڈیوٹی کی شرح زیادہ ہونے کے باعث پاکستان کے ٹیکسٹائل سیکٹر کو ترجیح نہیں دے سکتے، سری لنکا اور بھارت میں امپورٹ ڈیوٹی کی شرح کم ہے۔ ان خیالات کا اظہار پاکستان میں جاپان کے سفیر ہیروشی انوماتا نے راولپنڈی چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے دورے کے دوران تاجروں و صنعتکاروں سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ سفیر نے کہا جاپان اپنی انڈسٹری کو دوسرے ممالک میں شفٹ کر رہا ہے جن میں چین، بنکاک،سنگاپور اور ہندوستان شامل ہیں۔