بھارت اور سری لنکا میں سول جوہری توانائی کا معاہدہ‘ دفاعی تعاون بڑھانے پر اتفاق

17 فروری 2015

نئی دہلی (رائٹرز) سری لنکا اور بھارت میں سول نیوکلیئر توانائی کا معاہدہ ہو گیا جس کے تحت بھارت کولمبو اور دیگر شہروں میں پاور پلانٹس کے انفراسٹرکچر کی تعمیر اور عملے کو تربیت فراہمی میں معاونت کرے گا۔ رپورٹ کے مطابق چین سے اثرات میں کمی ممکن ہو سکتی ہے۔ بھارتی وزارت خارجہ کے ترجمان نے میڈیا کو بتایا معاہدے کے تحت بھارت سری لنکا کو چھوٹے جوہری ری ایکٹرز بھی فروخت کر سکے گا جس مقصد سری لنکا کی مدد کرنا ہے جو 2030 تک جوہری توانائی سے 600 میگا واٹ بجلی حاصل کرنا چاہتا ہے۔ سری لنکن حکام اور تجزیہ کاروں کے مطابق یہ اعلان سری لنکا کے نئے صدر میتھری پالا کے پہلے دورہ بھارت پر سامنے آیا ہے۔ میتھری نے نریندر مودی اور صدر پرتاب مکھرجی سے ملاقاتیں کیں۔ بھارتی وزیراعظم نے کہا یہ معاہدہ ہمارے باہمی اعتماد کا مظہر ہے۔ دوطرفہ دفاعی تعاون بڑھانے پر بھی اتفاق کیا ہے۔ میتھری پالا نے کہا پہلا دورہ کامیاب رہا۔