’’حکومت نے سندھ کا مقدمہ نہیں لڑا‘‘ پی ٹی آئی ارکان کا اسمبلی کی سیڑھیوں پر چوڑیاں رکھ کر احتجاج

17 اپریل 2018

کراچی (آئی این پی) تحریک انصاف کراچی کے جنرل سیکرٹری و سندھ اسمبلی میں پی ٹی آئی کے پارلیمانی لیڈر ایم پی اے خرم شیر زمان اور پی ٹی آئی سندھ کی رہنما ورکن سندھ اسمبلی ڈاکٹر سیما ضیاء نے سندھ اسمبلی کی سیڑھیوں پر سندھ حکومت کے خلاف انوکھا احتجاج کیا۔ پی ٹی آئی کے رہنماؤں نے لوڈ شیڈنگ پر قابو نہ پانے پر سندھ حکومت، صوبائی وزراء اور حکومتی ارکان کو ذمہ دار قرار دیا اور ان کے لیے سندھ اسمبلی کی سیڑھیوں پر چوڑیاں رکھ دیں۔ خرم شیر زمان نے کہا کہ مشترکہ مفادات کونسل کے اجلاس میں سندھ کا مقدمہ نہ لڑنے پر وزیراعلی سندھ پر یہ واجب ہے کہ وہ یہ چوڑیاں پہن لیں۔ سندھ حکومت نے لوڈشیڈنگ کے خاتمے کے لئے کوئی مؤثر اقدامات نہیں کئے اور نہ ہی وفاقی حکومت کے خلاف کوئی ٹھوس احتجاج کیا۔ سندھ کے نااہل حکمرانوں کی نااہلی کی سزا صوبے کے عوام بھگت رہے ہیں۔آٹھ سے اٹھارہ گھنٹے کی لوڈشیڈنگ نے عوام کی زندگی اجیرن کر رکھی ہے اور حکمران چین کی بانسری بجا رہے ہیں۔ ایسے حکمرانوں کو حکمرانی کا کوئی حق نہیں ہے۔ وزیراعلیٰ سندھ اور وزراء ٹیکس دینے والے پاکستانی شہریوں کے پیسے پر کروڑوں روپے مالیت کی گاڑیوں میں گھوم رہے ہیں۔اگر وفاق بجلی نہیں دیتا تو آپ جا کر ان کے ساتھ لڑیں لیکن آپ ایسا اس لیے نہیں کرتے کیونکہ آپ اپنی عیاشیوں میں مصروف ہیں۔ پیپلز پارٹی سندھ کے صدر سینئر صوبائی وزیر نثار کھوڑو نے کہا ہے کہ پی ٹی آئی والوں کی جانب سے اسمبلی کے احاطے میں چوڑیاں رکھنے سے کوئی فرق نہیں پڑتا۔ عمران خان ڈکٹیٹر کا سہولت کار رھا اسے سیاسی پارٹی کا سربراہ بننے کا حق نہیں۔ نثار کھوڑو نے کہا کہ پی ٹی آئی والے شاید ریحام خان سے چوڑیاں لے کر آئے ہونگے۔