دہشت گردی منصوبہ ناکام ہونے پر اسلام آباد کی سکیورٹی بڑھا دی گئی: شریف فیملی کو پیشی سے روکنے کی بات نہیں کی: ایس پی صدر

17 اپریل 2018

اسلام آباد(اپنے سٹاف رپورٹر سے)سیکٹرG - 14 کے گرین ایریا میں ہفتہ کو ملنے والی دو خود کش جیکٹوں ، پانچ دستی بموں ، بال بیرنگ ، پستولوں اور بڑی تعداد میں گولیوں کے ملنے کے بعد پولیس مختلف پہلوئوں سے تفتیش کر رہی ہے جس کے بعد تھانہ گولڑہ اور تھانہ ترنول کے علاقوں میں سرچ آپریشن کے دوران حراست میں لئے گئے 150 افراد سے پوچھ گچھ بھی کی گئی۔ دہشت گردی کے اس منصوبے کی ناکامی کے بعد پولیس نے شہر میں سکیورٹی بڑھا دی تھی پیر کے روز ایک خبر رساں ادارے نے ذرائع کے حوالے سے یہ خبر جاری کی کہ دہشت گردی کے خطرہ کے باعث شریف فیملی کو احتساب عدالت میں پیشی سے روکا گیا۔ اس بارے میں ایس ایس پی آپریشنز نجیب الرحمٰن بگوی سے نوائے وقت نے استفسار کیا تو انہوں نے بتایا کہ ایمونیشن برآمدگی کا واقعہ پورے شہر کے حوالے سے تھا کسی مخصوص جگہ کے بارے میں نہیں تھا نہ ہی ایسی کوئی چیز ہمارے علم میں آئی ہے دھماکہ خیز مواد ملنے کے بعد جتنے افراد شامل تفتیش کئے گئے تھے وہ سارے کوئی ملزم تو نہیں تھے جبکہ ایس پی صدر زون عامر نیازی نے اس حوالے سے کسی سے کوئی بات کئے جانے کی تردید کی اور کہا کہ میں اس بارے میں کوئی رائے کیسے دے سکتا ہوں میرے حوالے سے جو خبر بتائی گئی اس کا مجھ سے ذرہ برابر بھی تعلق نہیں نہ ہی میں ایسی بات کرنے کا اختیار رکھتا ہوں۔