بھارت: امارت شرعیہ کی دین بچاؤ دیش بچاؤکانفرنس، لاکھوں مسلمانوں کی شرکت

17 اپریل 2018

پٹنہ(آئی این پی)بھارتی ریاست بہار میں امارت شرعیہ نے دین بچاؤ دیش بچاؤکانفرنس کا انعقاد کیا، کانفرنس میں لاکھوں مسلمانوں نے شرکت کی، ملک پرمختلف قسم کے خطرات منڈلانے کے ساتھ دین اسلام کو بھی الحاد کا خطرات لاحق ہیں۔ بھارتی میڈیا کے مطابق بھارتی ریاست بہار میں امارت شرعیہ نے دین بچاؤ دیش بچاؤکانفرنس کا انعقاد کیا گیا ۔کانفرنس میں لاکھوں مسلمانوں نے شرکت کی۔ گاندھی میدان میں ہونیوالی کانفرنس میں لاکھوں مسلمانوں نے شرکت کی۔حالیہ برسوں میں یہ پہلا موقع ہے جب اتنی بڑی تعداد میں مسلمان دین اور وطن کے نام پر سڑکوں پراتر آئے۔واضح ہو کہ امارت شرعیہ بہار،جھارکھنڈ و اوڈیشہ 1921میں قائم ہوئی تھی جس کا مقصد مسلمانوں کے عائلی ، دینی اور معاشرتی مسائل حل کرنا ہے۔بورڈ کے چیف سیکریٹری اور امیر شریعت مولانا ولی رحمانی نے کہا کہ 4سال انتظار کیا۔یہ سوچ کر کہ بی جے پی حکومت آئین کے تحت ملک کی باگ ڈور چلائے گی لیکن مسلمانوں کے عائلی قوانین سے چھیڑچھاڑاورظلم و زیادتی کا عمل جاری ہے۔انہوں نے کہا کہ’’ دین بچاؤ دیش بچاؤ‘‘کانفرنس کا مقصدکسی سیاسی مفادات کاحصول نہیں بلکہ مسلمانوں میں ایمانی بصیرت ،بلند حوصلہ ،ایمانی غیرت ،اسلامی حمیت ،پیارے نبی ؐ کی شریعت اور وطن سے محبت کے حوالے سے بیداری اور ان میں شعور و آگہی پیدا کرنا ہے۔

EXIT کی تلاش

خدا کو جان دینی ہے۔ جھوٹ لکھنے سے خوف آتا ہے۔ برملا یہ اعتراف کرنے میں لہٰذا ...