;داعش نے کوئٹہ میں مسیحیوں پر حملے کی ذمہ داری قبول کر لی

17 اپریل 2018

کوئٹہ (بی بی سی) شدت پسند تنظیم داعش نے دعویٰ کیا ہے کہ اتوار کی شام کوئٹہ میں عیسیٰ نگری پر حملہ انہوں نے کیا جس کے نتیجے میں مسیحی برادری سے تعلق رکھنے والے 2 افراد ہلاک اور سات زخمی ہوئے ہیں۔ حکام کے مطابق حملہ آوروں نے گرجا گھر سے عبادت کر کے نکلنے والے مسیحی افراد کو نشانہ بنایا۔ بی بی سی مانیٹرنگ کے مطابق موبائل ایپ ٹیلیگرام پر جاری کیے گئے پیغام میں دولت اسلامیہ نے کوئٹہ میں ہونے والے دو اور حالیہ حملوں کی بھی ذمہ داری قبول کی ہے۔ پاکستان اور افغانستان میں کارروائیاں کرنے والی دولت اسلامیہ خراسان نے ٹیلیگرام پر اپنے پیغام میں کہا کہ 'خلافت کے سپاہیوں نے کوئٹہ میں مسیحیوں کے گرجا پر حملہ کیا۔
دولت اسلامیہ