لاہور ہائیکورٹ کے احاطہ میں مدعی کے وکلاء کا ملزمان پر بہیمانہ تشدد

17 اپریل 2018

لاہور(صباح نیوز)لاہور ہائی کورٹ کے احاطہ میں وکلاء آپے سے باہر ہو گئے اور سائلین پر تشدد کیا۔تفصیلات کے مطابق پاکپتن میں ایک لڑائی جھگڑے میں نامزد ملزمان ضمانت کنفرم کروانے لاہور ہائی کورٹ آئے اور یہاں لاہور ہائی کورٹ کے جسٹس طارق عباسی نے چار ملزمان کی ضمانت کی درخواست خارج اور دو ملزمان کی ضمانت کنفرم کر دی جیسے ہی سماعت ختم ہوئی تو ملزمان اور مدعی کمرہ عدالت سے باہر نکلے اور اس موقع پر مدعی کے وکلاء نے ملزمان پر تشدد شروع کر دی اور لاتوں،گھونسوں اور مکوں کا آزادانہ استعمال کیا۔اس موقع پر عدالت میں موجود وکلاء اور پولیس اہلکاروں نے بھی کوئی مداخلت نہ کی جبکہ مار کھانے والے ملزمان نے وکلاء سے معافی مانگ کر اپنی جان بخشی کروائی۔