عمران نے سفید جھوٹ بولا، وزیراعظم نے انہیں ملاقات کیلئے بلایا ہی نہیں: پرویز رشید

16 نومبر 2014

اسلام آباد + لاہور (نوائے وقت رپورٹ+ خصوصی رپورٹر) وفاقی وزیر اطلاعات پرویز رشید نے کہا ہے کہ عمران نے سفید جھوٹ بولا، نوازشریف نے انکو بالکل نہیں بلایا جب سے عدالت سے وارنٹ جاری ہوئے عمران صفائیاں دینے میں لگے ہیں، عمران کا ہر لفظ گرفتاری کے خوف کی عکاسی کر رہا ہے، دھرنوں پر عوام کے پیسے کے بے دریغ استعمال کا جواب دیا جائے، خان صاحب آپ نے جرم کئے اور قانون کا سامنا کرنے کی اخلاقی جرأت دکھائیں۔ عمران کے اعصاب پر نوازشریف بری طرح سوار ہو چکے ہیں۔ عمران کی زبان سن کر سر شرم سے جھک جاتا ہے، دھاندلی کا نعرہ کھوکھلا ثابت ہوا، خیبر پی کے کے عوام عمران خان اور پرویز خٹک کو ڈھونڈ رہے ہیں، عمران بہت جلد کہیں گے کہ عوام بھی نوازشریف کے ساتھ ملے ہوئے ہیں، عمران کے بولے گئے جھوٹ پر ایک کتاب لکھنی چاہئے۔ ترجمان وزیراعظم ہائوس نے بھی کہا ہے کہ وزیراعظم نے عمران سے رابطہ کیا اور نہ ملنے کی دعوت دی، عمران خان مسلسل غلط بیانی سے کام لے رہے ہیں۔ میڈیا سے گفتگو میں پرویز رشید نے کہا ہے کہ اگر آئی ڈی پیز عمران خان کا مسئلہ نہیں تو دہشت گردوں کی ذمہ داری بنتی ہے، وہ آئی ڈی پیز سے سی صورت علیحدہ نہیں ہو سکے۔ ذمہ داریوں سے جان چھڑا کر انہوں نے بے حسی کا مظاہرہ کیا، پاکستانی ہونے کے ناطے آئی ڈی پیز ہم سب کی ذمہ داری ہیں۔ وفاقی وزیر تر قی ومنصوبہ بندی احسن اقبال نے کہا ہے کہ عمران خان جھوٹ بول کر نوجوانوں میں شدت پسندی کا جذبہ پیدا نہ کر یں۔ تحر یک انصاف کے احتجاجی دھر نے اقتصادی دہشت گردی ہیں اور عوام نے جمہوریت کیخلاف دھرنوں کی سیاست کو مستردکر دیا ہے۔ حالات کا تقاضا ہے کہ عمران خان چوراہے کی بجائے پارلیمنٹ میں آکر بات کریں۔ مسلم لیگ (ن) کے مرکزی سیکرٹری اطلاعات سینیٹر مشاہداللہ خان نے کہا ہے کہ نوازشریف سے بات نہ کرنے کا اعلان کر کے عمران خان نے ذہنی و سیاسی ناپختگی کا ثبوت دیا ہے۔ دریں اثنا ترجمان تحریک انصاف شیریں مزاری نے کہا ہے کہ نوازشریف جعلی وزیراعظم ہیں، پرویز رشید کا نوازشریف کے حواری ہوتے ہوئے سرشرم سے کیوں نہیں جھکتا۔ وزیراعظم بھارت میں بزنس پارٹنرز سے ملے، کشمیری رہنمائوں سے نہیں۔ پنجاب پولیس نے 14لوگوں کا قتل کیا، پرویز رشید اس وقت کہاں تھے۔وزیراعلیٰ نے بجلی بحران ختم کرنے کا وعدہ کیا، آج تک سر شرم سے نہیں جھکا۔ اپنے بادشاہ سے پوچھیں عمران خان سے ملنے کیلئے کتنے پیغام بھیجے۔