کراچی : زیرزمین ٹینک کی صفائی کے دوران دم گھٹنے سے پانچ مزدور جاں بحق‘ فیکٹری سیل

16 مئی 2016

کراچی (کرائم رپورٹر+ نوائے وقت رپورٹ) کورنگی انڈسٹریل ایریا ویٹا چورنگی کے نزدیک پلاسٹک دانہ بنانے والی فیکٹری محمدی سنز میں دوران صفائی زہریلی گیس کے سبب دم گھٹنے سے پانچ مزدور جاں بحق ہوگئے جبکہ ایک کو بچا لیا گیا۔ پولیس نے فیکٹری کو سیل کرکے چوکیدار کو حراست میں لے لیا اور مقدمہ درج کر کے مالک کی تلاش شروع کردی۔ فیکٹری میں اتوار کی صبح صفائی کے لئے گیارہ مزدوروں کو بلایاگیا لیکن جب چھ مزدور کیمیکل کے زیر زمین ٹینک کی صفائی کے لئے اندر اترے تو ایک کے بعد ایک زہریلی گیس کی وجہ سے بیہوش ہوتے چلے گئے اور جب انہیں نکالا گیا تو ان میں سے پانچ نے دم توڑ دیا مرنے والوں میں معراج ولد ستار‘ عرفان ولد شریف‘ ارباز ولد رفیق‘ شکیل ولد شریف اور عبدالرحمان ولد عبدالسلام شامل ہیں۔ البتہ ایک مزدور 19 سالہ فیاض ولد رحیم کی جان بچالی گئی۔ پانچ افراد کی اندوہناک ہلاکت کے بعد علاقے کی فضا سوگوار ہوگئی مرنے والے افراد کے گھروں میں صف ماتم بچھ گئی۔ ڈائریکٹر جنرل ہسپتال سیمی جمالی کے مطابق دم گھٹ کر جاں بحق ہونے والے مزدوروں کی موت کس کیمیکل سے ہوئی، یہ پوسٹ مارٹم کے بعد ہی معلوم ہوسکے گا۔ دوسری جانب پولیس کا کہنا تھا لاپرواہی برتنے پر فیکٹری مالک کے خلاف کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔ مزدوروں کا کہنا ہے کہ فیکٹری مالک نے بتایا ہی نہیں کی ٹینک کے اندر کیا ہے۔
کراچی/مزدور