واپڈا میں ہزاروں اضافی ملازمین ہیں‘ آڈٹ کرایا جائے: عہدیدار

16 مئی 2016

اسلام آباد (فواد یوسفزئی‘ دی نیشن رپورٹ) پانی و بجلی کی وزارت کے سینئر عہدیداروں نے کہا ہے کہ واپڈا میں ہزاروں اضافی ملازمین ہیں جو بیکار بیٹھے رہتے ہیں، حکومت کو افرادی قوت کا آڈٹ کرانا چاہئے۔ ایک عہدیدار نے بتایا اسوقت واپڈا میں 17 ہزار ملازمین ہیں۔ گزشتہ 45 سے 48 برس میں واپڈا نے کوئی بڑا ڈیم بجلی تعمیر نہیں کیا حتیٰ کہ چھوٹے منصوبے ٹھیکیدار بناتے ہیں۔ دوسری جانب تقسیم کار کمپنیوں پر بہت ذمہ داریاں ہیں اور افرادی قوت کی کمی کا شکار ہیں اور انکی کارکردگی متاثر ہو رہی ہے۔ تقسیم کار کمپنیوں میں 2 ہزار ملازمین کی کمی ہے۔ پیسکو‘ لیسکو‘ حیسکو بھی افرادی قوت کی کمی کا شکار ہیں۔ حکومت کو واپڈا میں افرادی قوت کا آڈٹ کرنا چاہئے اور سرپلس سٹاف کو تقسیم کار کمپنیوں میں بھیجنا چاہئے ادھر واپڈا کے ترجمان نے وزارت کے سینئر عہدیداروں کے موقف کو مسترد کردیا اور کہا کہ واپڈا نے حال ہی میں کئی بڑے منصوبے مکمل کئے ہیں۔ ترجمان نے کہا کہ واپڈا میں سرپلس سٹاف کا انہیں علم نہیں۔
واپڈا عہدیدار