نائجیریا:فوج کی بوکو حرام کیخلاف کاروائیاں 58 جنگو ہلاک 5 اہم کمانڈروں سمیت کئی گرفتار

16 مئی 2016

ابوجا(اے این این) نائیجیریا میں کثیر الملکی ٹاسک فورس نے خواتین کی تعلیم کی مخالف شدت پسند تنظیم بوکو حرام کے خلاف چھاپہ مار کارروائیوں کے دوران 58 جنگجو ہلاک،5اہم کمانڈر درجنوں حامیوں سمیت گرفتار،60خواتین اور بچوں کو بازیاب کرا لیا گیا،گرفتار ہونے والوں میں نائیجیریا کے کماچی علاقے کے روایتی حکمران باقر کوو بھی شامل ہیں جبکہ بوکو حرام کے کئی اڈے بھی مسمار کر دئیے گئے ہیں ۔یہ دعویٰ نائیجیر یا میں شدت پسندوں کے خلاف سرگرم پڑوسی ملک کیمرون کی حکومت کی جانب سے سامنے آیا ہے جس کی فوج ملک میں سرکاری فوج کی مدد کے لئے موجود ہے ۔حکومتِ کیمرون کے وزیر اور ترجمان، عیسی تیہی روما نے بتایا ہے کہ بوکو حرام سے لڑنے والی کثیر ملکی مشترکہ ٹاسک فورس نے10 اور 12 مئی کے دوران منظم چھاپے مارے اور نائیجیریا کے مداوا جنگل میں قائم بوکو حرام کے اڈوں کو نشانہ بنایا گیا۔تیہی روما نے کہا کہ بوکو حرام کے قبضے سے نائجیریا کی 15 خواتین، کیمرون کی تین خواتین اور 28 بچے بھی چھڑا لیے گئے۔ مغویوں کو بوکو حرام کے محفوظ ٹھکانوں میں بند رکھا گیا تھا۔ رہائی کے بعد اِنہیں کیمرون پہنچا دیا گیا۔ انھوں نے بتایا ہے کہ ہاتھ لگنے والے حربی نوع کے ہتھیاروں کی کثیر تعداد کو تباہ کیا گیا یا قبضے میں لیا گیا۔ انھوں نے بتایا کہ کیمرون اور نائیجیریا کی افواج کا کوئی فرد ہلاک نہیں ہوا۔