5 برس کے دوران پاکستان پوسٹ کو 24 ارب 91 کروڑ سے زائد نقصان کا انکشاف

16 مئی 2016

اسلام آباد (آئی این پی) 5 برس کے دوران پاکستان پوسٹ آفس کو 24 ارب 91 کروڑ 43 لاکھ سے زائد کا نقصان ہوا‘ آمدنی سے زائد اخراجات خسارے میں اضافہ کا باعث بنے‘ موجودہ دور حکومت میں خسارے کی شرح سب سے زیادہ رہی‘ مالی سال 2013-14 اور 2014-15 میں محکمے کا خسارہ 12ارب 91 کروڑ 96 لاکھ روپے رہا۔ وزارت مواصلات کی دستاویز کے مطابق وزارت نے گزشتہ پانچ برسں کی آمدنی اور اخراجات کے اعدادو شمار جاری کیے ہیں۔ 2010-11 میں ادارے کی آمدنی آٹھ ارب روپے سے زائد اور اخراجات دس ارب روپے سے تجاوز کرگئے تھے‘ 2011-12 میں پاکستان پوسٹ کی آمدنی آٹھ ارب چوبیس کروڑ روپے تھی جبکہ اخراجات بارہ ارب پچاس کروڑ سے زائد کئے گئے 2012-13 میں ادارے کی آمدنی آٹھ ارب 37کروڑ جبکہ اخراجات 14ارب سے تجاوز کرگئے تھے۔ 2013-14 میں آمدنی 9ارب 12کروڑ جبکہ اخراجات پندرہ ارب 71کروڑ سے زائد رہے‘ 2014-15 میں پاکستان پوسٹ کی آمدنی 9ارب 67 کروڑ اور اخراجات 16 ارب سے بھی تجاوز کرگئے۔ وزیراعظم پاکستان کی طرف سے اصلاحاتی ایجنڈے کی منظوری بھی دی گئی جس کا مقصد پاکستان پوسٹ کو منافع بخش ادارہ بنانا ہے اور اضافی آمدنی پیدا کرنا ہے جس میں روپے کی منتقلی‘ پاکستان پوسٹ لاجسٹک کمپنی کا قیام اور محکمے کی ری پرانڈنگ بھی شامل ہے۔ اس حوالے سے خسارے پر قابو پانے کے لئے خزانہ ڈویژن کو بھی تجاویز ارسال کی ہیں جس میں نیشنل سیونگز سکیموں کے آفر کرنے میں قابل ادا کمیشن کی قیمت پر نظر ثانی کرنا ہے اس تجویز کی منظوری سے پاکستان پوسٹ کی آمدنی میں اضافہ ممکن ہے۔