ملک میں کرپشن کیخلاف ماحول بن رہا ہے: طاہر محمود اشرفی

16 مئی 2016

گوجرانوالہ(نمائندہ خصوصی) چیئرمین علماء کونسل حافظ طاہر محمود اشرفی نے کہا ہے کہ احتساب کا نعرہ لگانے والے مل بیٹھ کر ٹی او آر بنائیں تاکہ کرپٹ عناصر کیخلاف بلا امتیاز کارروائی ہو سکے، وزیراعظم تو اسمبلی میں پانامہ لیکس پر جواب دیں گے باقی چھ سو لوگوں جن کے نام پاناما میں آئے ہیں وہ کہاں جواب دیں گے گوجرانوالہ میں استحکام پاکستان کنونشن سے خطاب کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ ملک میں کرپٹ عنا صر، قبضہ ما فیا اور انتہا پسندی کو فروغ دینے میں مصروف افراد کا بلا امتیاز احتساب ہونا چاہیے دائیں بائیں کرپٹ لوگوں کو کھڑا کر کے کرپشن کے خاتمہ کی باتیں کرنیوالوں پر ہنسی آتی ہے قوم جان چکی ہے کہ کر پشن کے اس حمام میں تمام لوگ ننگے ہیں سپریم کورٹ نے پاناما لیکس کمیشن پر بھجوایا جانیوالا خط واپس بھجوا دیا ہے احتساب کا نعرہ لگانے والی تمام سیا سی جماعتیں مل بیٹھ کر ایک با اختیار جامع کمشن بنائیں جو پاناما لیکس کے ساتھ ساتھ قرضہ خوروں، قبضہ گروپوں، انتہا پسندی اور دہشت گردی کے نام پر ملک و قوم کو لوٹنے والوں کا احتساب کرے پاکستان میں سیاسی جماعتیں نہیں عوام سب سے بڑی جماعت ہے قوم خود 2018 کے انتخابات میں فیصلہ سنائے گی ان کا کہنا تھا کہ ملک میں کرپشن کیخلاف ماحول بن رہا ہے اللہ کرے کہ یہ ماحول مزید طاقت پکڑے اور ان کرپٹ لوگوں سے جان چھوٹ جائے۔ ایک سوال کے جواب میں حافظ طاہر اشرفی کا کہنا تھا کہ سیاسی پارٹیاں عورتوں کی حفاظت نہیں کر سکتیں وہ خواتین کو جلسوں میں بلا کر ان کی تذلیل نہ کروائیں۔