پانامہ لیکس چھان بین پارلیمانی کمیٹی کے سپرد کرنے کی کوشش ہورہی ہے: طاہر القادری

16 مئی 2016

لاہور (خصوصی نامہ نگار) عوامی تحریک کے قائد ڈاکٹر محمد طاہر القادری نے کہا ہے کہ پانامہ لیکس کی چھان بین کا معاملہ پارلیمانی کمیٹی کے سپرد کرنے کی کوشش ہورہی ہے۔ آف شور کمپنیوں میں ملوث ارکان پارلیمنٹ کی کوشش ہو گی کہ وہ اپنا احتساب اپنے ہاتھ میں ہی رکھ لیں،پانامہ لیکس اب پارلیمنٹ کا ایشو نہیں رہا۔ یہ نیب، ایف آئی اے اور ایف بی آر کا معاملہ ہے۔ سپریم کورٹ کو لکھا جانیوالاہوائی خط بھی اس مسئلے کو دبانے کی ایک کوشش تھی۔ حکمرانوں کی آمدن کے ذریعے بتانے کیلئے کچھ میاں مٹھو بے چین بیٹھے ہیں۔ وہ رہنمائوں سے گفتگو کر رہے تھے ۔ڈاکٹر طاہر القادری نے کہا کہ حکمرانوں کی اوّل و آخر کوشش ہو گی کہ کوئی با اختیار کمیشن نہ بننے پائے، مہمان حکومت جاتے جاتے بیوروکریسی سے غلط کام کرائے گی، بیوروکریٹ چوکنے رہیں۔ انہوں نے کہا کہ دھرنے میں گو نوا ز گو کا نعرہ لگایا یہ نعرہ اب اپنی عملی شکل اختیار کرنے جا رہا ہے۔ دھاندلی کے نتیجے میں وجود میں آنے والی پارلیمنٹ کبھی بھی چوروں کا احتساب نہیں کرسکتی۔ انہوں نے کہا کہ 17 جون کو یوم شہدا منایا جائیگا۔ کارکن تیاریاں کریں ۔خون شہادت کے ایک ایک قطرے کا حساب لیں گے۔