اوکاڑہ: بگڑے امیر زادوں نے تربوز کے پیسے مانگنے پر غریب ریڑھی بان کو اُبلتے پانی کے کڑاہے میں پھینک دیا‘ جسم جھلس گیا‘ ہسپتال منتقل

16 اپریل 2018

اوکاڑہ (نامہ نگار) نواحی علاقہ رینالہ خورد میں با اثر بگڑے امیر زادوں نے غریب ریڑھی بان کو ابلتے پانی میں پھینک دیا‘ بستی بابا لال شاہ کے اسامہ نے تربوز کی ریڑھی لگائی ہوئی تھی کہ شیخ جبران اور اس کے بھائی شیخ ہنی جن کی صدر بازار میں کلاتھ ہائوس ہے نے تربوز خریدا اور اپنی مرضی کے نرخ دئیے لیکن ریاض نے پوری قیمت پر اصرار کیا تو دونوں بھائی طیش میں آگئے۔ ریڑھی بان کو مبینہ طور پر تشدد کانشانہ بنانا شروع کر دیا اور ابلتے پانی کے کڑاہے میں پھینک دیا جس سے ریڑھی بان باہر نکال آیا تو مبینہ طور پر دونوں بھائیوں نے اس پرگرم پانی پھینک دیا۔ اس سے غریب ریڑھی بان کا آدھا جسم جھلس گیا جسے مقامی لوگوں نے رورل ہیلتھ سنٹر منتقل کردیا۔ متاثرہ شخص نے ڈی پی او اوکاڑہ سے مطالبہ کیا ہے کہ ملزموں کے خلاف کارروائی عمل میں لائی جائے۔
ریڑھی بان/ جھلس گیا