حضور اکرم ؐ کو معراج کے موقع پر اللہ نے نماز کا تحفہ دیا، پیر سرکارجی

16 اپریل 2018

راولپنڈی (نوائے وقت رپورٹ)واقعہ معراج جہاں حضور اکرم ؐکے ہزاروں معجزات میں سے ایک عظیم الشان معجزہ ہے وہیں تاریخ انسانی کے ان بڑے واقعات میں سے ہے جنہوں نے تاریخ کا رخ موڑ دیا، زمانے کی رفتار کو بدل ڈالا اور انسانی تاریخ پر اپنا مستقل اثر چھوڑا ہے ان خیالات کا اظہار پیر سرکارجی نے درگاہ عالیہ و دربار عالیہ محمدیہ قادریہ قلندریہ راجڑشریف، میں منعقدہ 18ویں سالانہ عظیم الشان معراج النبیﷺ کانفرنس و عرس مبارک سے خطاب کرتے ہوئے کیا پیر سرکارجی نے کہا کہ و اقعہ معراج اس کائنات کا عظیم ترین واقعہ ہے اور یہ شرف صرف حضورﷺ کو حاصل ہوا۔معراج میں حضور نبی کریمﷺ کو قیامت تک ہونے والے تمام واقعات کا علم عطا کر دیا گیا، معراج کے دوران حضورﷺ کو احوال آخرت، جنت اور دوزخ کا مشاہدہ کرایا گیا جب کہ باقی سب کو ان کا چشم دید مشاہدہ موت کے بعد کرایا جائے گا۔نماز تحفہ معراج،نبی کریمﷺ کی آنکھوں کی ٹھنڈک،دین کا بنیادی ستون اور اہل ایمان کی معراج ہے، یہ وہ عظیم تحفہ ہے جو امام الانبیا، حضرت محمدﷺ کو امت کے لیے تحفے کے طور پر معراج کی شب عطا کیا گیا، آج ہمیں یہ عہد کرنا ہوگا کہ ہم نماز کو فرض جانتے ہوئے زندگی بھر اپنے ہر عمل پر مقدم رکھیں گے۔